عالمی اجتاعی سے صیہونی سازشیں ناکامی ہو جائیگی :مولانا راحت حسین


بخشالی (نمائندہ پاکستان) جمعیت علماء اسلام کے صوبائی ڈپٹی جنرل سیکرٹری اور سابق سنیٹر مولانا راحت حسین نے کہا کہ اپریل میں جمعیت علماء اسلام کے زیر اہتمام منعقدہ ہونے والا صد سالہ عالمی اجتماع ملک میں اسلامی نظام کے لئے سنگ میل ثابت ہوگی ۔ عالمی اجتماع سے ملک کے خلاف کی جانے والی سازشوں اور پاکستان کو سیکو لر بنانے کی کو ششوں کوروکنے میں مدد ملے گی۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے بخشالی میں عالمی اجتماع کی تیاریوں کے سلسلے میں منعقدہ کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ اس موقع پر ضلعی جنرل سیکرٹری مولانا امانت شاہ حقانی ؔ صوبائی ڈپٹی سیکر ٹری اطلاعات قاضی بشیر احمد تحصیل مردان کے امیر مولانا عاقل ، ضلع مردان کے سیکرٹری اطلاعات مولانا قیصر الدین ، قاری نیاز علی ، مولانا تاج الامین جبل ، مفتی حماد اللہ اور دیگر نے بھی خطاب کیا ۔ سنیٹر مولانا راحت حسین نے کہا کہ اس اجتماع میں دنیا بھر کے جید علماء کرام اور مذہبی شخصیات شرکت کریں گے امام کعبہ اور دارالعلوم دیوبند کے اکابرین خصوصی طر پر شرکت کریں گے ۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کے اسلامی تشخص اور نظریاتی سرحدات کے خلاف اندرونی اور بیرونی سازشوں کے تناظر میں اس اجتماع خاص اہمیت حاصل ہے ۔ مولانا راحت حسین نے کہا کہ بعض عناصر بیرونی اجنڈے کے تحت نوجوانوں کو مذہب سے بیزار بنانے میں لگی ہے ۔اور دھرنوں کے ذریعے نوجوان نسل کو ناچ گانے اور لہو لعب کے طرف راغب کرنے کی کوششوں میں لگے ہیں ۔ لیکن انشاء اللہ اس عالمی اجتماع کے کامیابی سے ان سازشوں کا خاتمہ ہوگا ۔ انہوں نے کہا کہ اجتماع 7,8 اور 9 اپریل کو ہوگا ۔ جس میں ایک اندازے کے مطابق 60 لاکھ سے زائد لوگ شریک ہوں گے ۔