جعلی ڈگری کیس : سابق ایم این اے اعجاز چودھری کو 3سال قیدکی سزا، گرفتا ر ی کے بعد جیل منتقل کر دیا گیا

منڈی بہائو الدین

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )عدالت نے جعلی ڈگری کیس میں سابق ایم این اے اعجاز چودھری کو 3سال قید اورجرمانے کی سزا سنا دی جس کے بعد انہیں گرفتار کر کے جیل منتقل کر دیا گیا ہے ۔
ایکسپریس نیوز کے مطابق ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج نے الیکشن کمیشن کی جانب سے دائر استغاثہ پر فیصلہ سناتے ہوئے مسلم لیگ نواز چھوڑ کر تحریک انصاف میں شامل ہونے والے سابق رکن قومی اسمبلی اعجاز چودھری کو 3سال قید کی سزا سنا دی جس کے بعد انہیں گرفتار کر کے منڈی بہاﺅالدین ڈسٹرکٹ جیل منتقل کر دیا گیا ہے ۔فیصلے میں اعجاز چودھری کو 20ہزار روپے جرمانہ ادا کرنے کی ہدایت بھی کی گئی ہے اور جرمانہ ادا نہ کرنے پر مزید 2ماہ قید کا حکم دیا گیا ہے .

TapMad نے ہمہ وقت سرگرم رہنے والوں کے لئے انٹرٹینمنٹ کی نئی دنیا متعارف کروادی

اعجاز چودھری 2013ءکے عام انتخابات میں این اے 108منڈی بہاﺅالدین سے مسلم لیگ نواز کی ٹکٹ سے منڈی بہاﺅ الدین سے رکن قومی اسمبلی منتخب ہوئے تھے اور بعد میں تحریک انصاف کو جوائن کیا تھا ۔وہ منڈی بہاﺅ الدین سے 2بار ایم این اے منتخب ہو چکے ہیں ۔