سکھ برادری کا مردم شماری میں علیحدہ خانہ شامل نہ کرنے پر مظاہرہ

پشاور (کرائمز رپورٹر)سکھ برادری نے مردم شماری فارم میں مذہبی خانہ میں سیکھ برادری کو شامل نہ کرنے پر گزشتہ روز پشاور پریس کلب کے سامنے احتجاج مظاہرہ کیامظاہرین نے ہاتھوں میں بیرزاورپلے کارڈاُٹھارکھے تھے جن پرانکے مطالبات کے حق میں نعرے درج تھے مظاہرین کی قیادت سکھ برادری کے نمائندے رادیس سنگھ ٹونی اوریوتھ اسمبلی اقلیتوں کے وزیرباباجی گرپال سنگھ کررہے تھے جنکاکہناتھاکہ مردم شماری کے فارم میں سکھ برادری کاخانہ نہ ہوناقابل افسوس ہے اس سے پاکستان کے چوتھے بڑھے اقلیت کی دل آزاری ہوئی ہے اُنہوں نے کہاکہ پاکستان کے آئین کے مطابق تمام اقلیتوں کوبرابری کے حقوق حاصل ہے اُنہوں نے چیف جسٹس سے مطالبہ کیا کہ وہ فوراً نوٹس لے کرمردم شماری خانہ میں سکھ برادری کاخانہ شامل کرنیکے احکامات جاری کرے بصورت دیگراحتجاج کاسلسلہ بڑھایاجاے گا ۔