تازہ ترین

ای پیپر

پروفیسر ڈاکٹر قاری محمد طاہر

پروفیسر ڈاکٹر قاری محمد طاہر

مجاہد ختم نبوت مولانا اللہ وسایا (2)

سوال:آپ کے استاد کون تھے؟ جواب:میرے استاد کا نام مولانا حافظ اللہ بخش تھا جو جامعہ عباسیہ بہاولپور سے فارغ تھے۔ سوال:کیا اس مدرسہ میں صرف دینی تعلیم دی جاتی تھی؟ جواب:مدرسہ رفیق العلماء بستی ڈتہ بلوچ میں دینی تعلیم کے علاوہ عصری تعلیم کا بندوبست بھی تھا۔ مولانا حافظ اللہ بخش ...

تفصیل پڑھیں

تنظیم سے عدم تنظیم کا سفر

تشکیل پاکستان کو چند ہی برس گزرے تھے۔ ملک میں اسلامی نظام برپا کرنے کی کوششیں جاری تھیں۔ اس معاملے میں جماعت اسلامی پیش پیش تھی۔ اگرچہ جماعت کے اراکین کی تعداد کچھ زیادہ نہ تھی۔ یوں بھی جماعت قلت و کثرت پر زیادہ یقین نہ رکھتی تھی۔ اس کا زیادہ تر بھروسہ اللہ کی نصرت پہ تھا۔ ...

تفصیل پڑھیں

کلام اقبال (شرح بال جبریل)غزل نمبر: 6

پریشاں ہو کے میری خاک آخر دل نہ بن جائے جو مشکل اب ہے یارب پھر وہی مشکل نہ بن جائے نہ کر دیں مجھ کو مجبورِ نوا فردوس میں حوریں مرا سوزِ دُروں پھر گرمی محفل نہ بن جائے کبھی چھوڑی ہوئی منزل بھی یاد آتی ہے راہی کو کھٹک سی ہے جو سینے میں غم منزل نہ بن جائے بنایا عشق نے دریائے نا پیدا ...

تفصیل پڑھیں

چاچا رفیق کے تبصرے

اس کی عمر چالیس سے پچاس کے درمیان ہو گی۔ وہ بالکل ان پڑھ ہے۔ پڑھنا بالکل نہیں جانتا، جب پڑھنا نہیں جانتا تو لکھناتو بالکل ہی نہیں جانتا لیکن اسے اخبار پڑھنے کا بہت شوق ہے۔ وہ خود تو پڑھنا نہیں جانتا لیکن اخبار دیکھ کر نہیں سن کر پڑھ لیتا ہے۔ صبح ہوتے ہی اخبار والے کے انتظار میں ...

تفصیل پڑھیں

کلام اقبال (شرح بال جبریل)غزل نمبر:5

  کیا عشق ایک زندگی مستعار کا کیا عشق پائدار سے ناپائدار کا وہ عشق جس کی شمع بجھا دے اجل کی پھونک اس میں مزا نہیں تپش و انتظار کا مری بساط کیا ہے، تب و تاب یک نفس شعلے سے بے محل ہے الجھنا شرار کا کر پہلے مجھ کو زندگی جاوداں عطا پھر ذوق و شوق دیکھ دلِ بے قرار کا کانٹا وہ دے جس کی ...

تفصیل پڑھیں

بالِ جبریل کی تیسری نظم (2)

ان مظاہر قدرت میں مزید تاب داری پیدا کرنے کی تمنا در اصل عشق حقیقی کے اعتبار سے اس بات کی خواہش ہے کہ اے اللہ! تو اپنے حسن لازوال کے وہ کرشمے دکھا کہ میں ان مظاہر مَیں ایسا مستغرق ہو جاؤں کہ حسن کے جلوؤں میں ایسا ڈوب جاؤں کہ مجھے ہر طرف صرف اور صرف اللہ ہی نظر آئے اور مَیں ماسوا ...

تفصیل پڑھیں

بالِ جبریل کی تیسری نظم (1)

گیسوئے تاب دار کو اور بھی تاب دار کر ہوش و خرد شکار کر، قلب و نظر شکار کر عشق بھی ہو حجاب میں، حسن بھی ہو حجاب میں یا تو خود آشکار ہو یا مجھے آشکار کر تو ہے محیطِ بے کراں، میں ہوں ذرا سی آبجو یا مجھے ہمکنار کر یا مجھے بے کنار کر مَیں ہوں صدف تو تیرے ہاتھ میرے گہُر کی آبرو مَیں ہوں ...

تفصیل پڑھیں

اسلامی نظریاتی کونسل ادارہ جاتی پس منظر اور کارکردگی (2)

فصل دوم کا عنوان ’’قرار داد اور مقاصد‘‘ ہے۔12 مارچ1949ء کو مجلس دستور ساز کا اجلاس مولاناتمیز الدین کی صدارت میں ہوا، جس میں قرار داد مقاصد لیاقت علی خان نے پیش کی جو بحث مباحثے کے بعد منظور ہوئی۔باب پنجم میں تذکرہ ہے کہ1955ء میں نئی دستور ساز اسمبلی نے نئے آئین کا مسودہ ...

تفصیل پڑھیں

اسلامی نظریاتی کونسل ادارہ جاتی پس منظر اور کارکردگی (1)

یہ اسلامی نظریاتی کونسل کی مفصل رپورٹ ہے۔ اس کا نام اگرچہ رپورٹ ہے، تاہم یہ رپورٹ کم،کتاب زیادہ ہے، بلکہ رپورٹ بھی نہیں کتاب ہی ہے جو297 صفحات پر مشتمل ہے۔ یوں بھی رپورٹ تو ہمیشہ مختصر ہوتی ہے، جبکہ کتاب مفصل۔ اس لئے اس پر ہم رپورٹ کا اطلاق کیسے کریں؟ لیکن ہم مجبور ہیں، جب صاحب ...

تفصیل پڑھیں

کلام اقبال (شرح بال جبریل) (2)

اگر اللہ لامحدود ہے تو وہاں شوق کس کے لئے آئے گا اور نوائے شوق کیسے پیدا ہو گی۔اقبال شناسوں کی ہر توضیح کا اپنا مقام ہے۔ ان کی وضاحت پر ہمارے دیدہ و دِل فرش راہ ہیں، لیکن ہمارے نزدیک مکان و لامکان کا تصور شعور و ادراک سے وابستہ ہے۔ہمارے نزدیک مکان میں باشعور چیزیں شامل ہیں۔ خواہ ...

تفصیل پڑھیں

کلام اقبال (شرح بال جبریل) (1)

اگر کج رو ہیں انجم، آسماں تیرا ہے یا میرا؟مجھے فکر جہاں کیوں ہو، جہاں تیرا ہے یا میرا؟اگر ہنگامہ ہائے شوق سے ہے لامکاں خالیخطا کس کی ہے یا رب! لامکاں تیرا ہے یا میرا؟اسے صبح ازل انکار کی جرأت ہوئی کیونکر؟مجھے معلوم کیا! وہ رازداں تیرا ہے یا میرا؟محمدؐ بھی ترا جبریل بھی قرآن بھی ...

تفصیل پڑھیں

گدی اور گدی کا جھگڑا

یہ ماضی قریب ہی کا واقعہ ہے جس کی خبر اخبارات میں اس طرح چھپی ہے کہ سرگودھا میں گدی کے جھگڑے پر درگاہ کے ایک متولی نے چار خواتین سمیت بیس مریدوں کو قتل کر دیا۔ یہ واقعہ کیسے ہوا! کیوں ہوا؟ اس کا پس منظر اور تہہ منظر کیا ہے اس کا پتہ چلانا حکومت کے کارندوں، پولیس یا دیگر تفتیشی ...

تفصیل پڑھیں

1947ء میں لدھیانہ کے مسلمانوں پر کیا گزری؟

مشرقی پنجاب کے مسلمان ہنستے بستے اپنے گھروں میں آرام سے رہ رہے تھے، دیکھتے ہی دیکھتے ہندو مسلم فساد شروع ہوئے، قتل و غارت، مار دھاڑ شروع ہو گئی اور سب مسلمان گھروں سے نکلنے پر مجبور کر دئیے گئے۔ ’’1947ء میں لدھیانہ کے مسلمانوں پر کیا گزری‘‘۔۔۔ ایک ضخیم کتاب کا نام ہے ۔ ...

تفصیل پڑھیں

تربیت افراد

تعلیم اور تربیت توام ہیں۔ یعنی جڑواں بھائی ہیں۔ تعلیم کے ساتھ تربیت نہ ہو تو تعلیم کاعمل بے سود ہے۔اگر تربیت تو ہو تعلیم نہ ہو تو بھٹکنے کے امکانات موجود رہتے ہیں۔ وہ ایک بہت بڑی درسگاہ کے چھوٹے موٹے معمولی استاد نہ تھے، بلکہ بہت بڑے بڑے استادوں میں ان کا بہت بڑا مرتبہ تھا۔ ...

تفصیل پڑھیں

تزکیۂ نفس: تعلیمات نبویﷺکی روشنی میں

’’تزکیہ نفس‘‘ ایک کتاب کا نام ہے جو ڈاکٹر حافظ زاہد علی کی تصنیف ہے۔ قرآن کے مطابق رسول اللہﷺکی بعثت کے مقاصد چار ہیں۔ 1۔تلاوت آیات،2۔ تعلیم کتاب،3۔ تعلیم حکمت، 4۔ تزکیہ نفسان۔ فرائض میں سے ہر فریضہ اپنی جگہ اہم ہے، تاہم تزکیہ نفس تعلیمات اسلامیہ کی اصل غایت ہے جو ...

تفصیل پڑھیں

شرح بال جبریل

میری نوائے شوق سے شور حریم ذات میں غلغلہ ہائے الاماں بت کدۂ صفات میں حور و فرشتہ ہیں اسیر میرے تخلیات میں میری نگاہ سے خلل تیری تجلیات میں گرچہ ہے میری جُستجو دیر و حرم کی نقش بندمیری فغاں سے رستخیز کعبہ و سومنات میں گاہ مری نگاہِ تیز چیر گئی دلِ وجود گاہ اُلجھ کے رہ گئی میرے ...

تفصیل پڑھیں

سہ ماہی المظاھر (مولانا محمد امین اورکزئی شہید نمبر)

امریکی اور روسی آویزش کے نتیجہ میں امریکی افواج نے افغانستان میں اپنا مستقل پڑاؤ ڈال دیا۔ اس پڑاؤ کے اثرات پاکستان کے علاقوں پر بھی ہوئے۔بش انتظامیہ نے کسی نہ کسی بہانے پاکستان کے سرحدی علاقوں میں ڈرون حملے شروع کر دئیے۔ جس سے پاکستان کو بھی کافی نقصان کا سامنا کرنا پڑا۔ ...

تفصیل پڑھیں

فرزند اقبال ڈاکٹر جاوید اقبال کی زندگی کے آخری ایام

ڈاکٹر جاوید اقبال کا انتقال 3 اکتوبر 2015ء کو ہوا۔ اپنے انتقال سے تقریباً ایک ماہ قبل ڈاکٹر صاحب نے معروف سیرت نگارپروفیسر ڈاکٹر انور محمود خالد سے رابطہ کیا اور کہا کہ زندگی کا بھروسہ نہیں، میری خواہش ہے، میں اپنے چیدہ اور چنیدہ دوستوں کے ساتھ ایک شام کا اہتمام کروں اور کچھ ...

تفصیل پڑھیں

سرفروش قبیلے کا آخری مسافر

قاری محمد اکبر ہماری مسجد میں استاد تھے۔ ہم لوگ ان سے قرآن حکیم پڑھتے تھے۔ایک روز راستہ میں ملے، فرمانے لگے زندگی میں کچھ کر گزرنے کی تمنا ہی زندگی کی اصل ہے اگر یہ نہ ہو تو انسان اور ڈھور ڈنگر میں کچھ فرق نہیں۔ مَیں نے کہا محض تمنا تو کافی نہیں فیصلہ تو عملی اقدام سے ہی ہوتا ...

تفصیل پڑھیں

مولانا عبیداللہ سندھیؒ اور ان کی والدہ پریم کور

مولانا عبیداللہ کے نام کے ساتھ سندھی کا لاحقہ لگا ہوا ہے اور وہ مولانا عبیداللہ سندھیؒ کے نام سے جانے جاتے ہیں، لیکن وہ سندھ کے رہنے والے نہیں تھے، بلکہ ان کا تعلق سیالکوٹ سے تھا۔ سیالکوٹ کے قریب ایک گاؤں چیانوالی کے نام سے ہے، مولانا کی پیدائش اسی گاؤں میں ہوئی۔ ان کی والدہ کا ...

تفصیل پڑھیں