عالمی یومِ مسرت منایا گیا،سب سے خوش ملک ناروے پاکستان کا 80، بھارت کا 122واں، امریکہ کا 14واں نمبرسب سے ناخوش ملک جمہوریہ وسطی افریقہ

صفحہ آخر


نیو یارک ( نیٹ نیوز)دنیا بھر میں عالمی یوم مسرت 20 مارچ کو منایا جاتا ہے، اسی روز اقوام متحدہ کی جانب سے عالمی خوشی کا اشاریہ بھی جاری ہوتا ہے جس میں دنیا بھر کے ممالک کو وہاں بسنے والے لوگوں کے جذبات کے مطابق خوش اور ناخوش ممالک میں تقسیم کیا جاتا ہے۔2012سے لگاتار جاری ہونے والے اشاریے کی پانچویں رپورٹ میں دنیا کے سب سے زیادہ خوش ملک کا اعزاز ناروے کے نام رہا ہے ۔ اس میں پاکستان کا نام 80ویں نمبر پر ہے ۔اس سال ناروے نے پہلی پوزیشن ڈنمارک کو شکست دے کر اپنے نام کی ہے، خیال رہے کہ ڈنمارک گذشتہ تین سال سے عالمی خوشی کے اشاریے میں پہلے نمبر پر براجمان تھا۔ آئس لینڈ دنیا کا تیسرا سب سے خوش ملک قرار پایا۔ چوتھی پوزیشن سوئٹزرلینڈ، پانچویں پوزیشن فِن لینڈ، چھٹی پوزیشن نیدرلینڈز جبکہ ساتویں پوزیشن کینیڈا کے نام رہی۔نیوزی لینڈ، آسٹریلیا اور سویڈن کو بالترتیب آٹھویں، نویں اور دسویں نمبر پر رکھا گیا ہے۔دنیا کا سب سے طاقتور ملک امریکہ گذشتہ سال کی نسبت ایک درجہ تنزلی کے بعد اب 14ویں نمبر پر آگیا ہے، جس سے یہ ثابت ہوتا ہے کہ طاقت اور خوشی آپس میں کوئی تعلق نہیں رکھتے۔اقوام متحدہ کے ادارے کی جاری کردہ اس رپورٹ میں 155 ممالک شامل ہیں جن میں پاکستان کا نمبر 80 واں ہے، بھارت 122ویں پوزیشن پر جبکہ چین 79ویں نمبر ہے۔ دنیا کا سب سے ناخوش ملک جمہوریہ وسطی افریقہ کو قرار دیا گیا ہے، ناخوش ممالک میں دوسرے نمبر پر برونڈی، تیسرے نمبر پر تنزانیہ جبکہ چوتھے نمبر پر شام کا نام ہے۔
یوم مسرت