سائنسدانوں نے مستقبل دیکھنے والا روبوٹ تیار کر لیا، نجومیوں کی چُھٹی ہو گئی

ڈیلی بائیٹس

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) روبوٹ ٹیکنالوجی کی ترقی نے حضرت انسان کو خوفزدہ کر رکھا ہے، مبادا کہ یہ انسانوں پر حاوی نہ آ جائیں اور اس زمین پر ان کا قبضہ نہ ہو جائے۔ اور اب سائنسدانوں نے ایک ایسا روبوٹ ایجاد کر لیا ہے کہ لوگوں کا یہ خوف مزید بڑھ جائے گا۔ ڈیلی سٹار کی رپورٹ کے مطابق کیلیفورنیا کی یونیورسٹی آف برکلے کے سائنسدانوں نے جو نیا روبوٹ تیار کیا ہے یہ مستقبل کی پیش گوئی کرنے کی حیران کن صلاحیت رکھتا ہے۔یہ ایسی چیزوں کو ہینڈل کرنے اور استعمال کرنے کے طریقے بھی بتا سکتا ہے جو کبھی انسان نے دیکھی بھی نہ ہوں۔

بچوں کی زندگیوں میں نظم و ضبط اور اصول بہت ضروری ہیں:کاجول
سائنسدانوں نے اس روبوٹ میں کٹنگ ایج ٹیکنالوجی، جو ویژول فورسائٹ(Visual foresight)کے نام سے جانی جاتی ہے، استعمال کی ہے۔ اس ٹیکنالوجی کے ذریعے یہ روبوٹ ہرطرح کے گھریلوکام کاج کرنے کی صلاحیت بھی رکھتا ہے اور آزادانہ طور پر صفائی ستھرائی سے برتن دھونے تک ہر کام کر سکتا ہے اور اسے کسی انسانی ہدایت کی ضرورت نہیں ہو گی۔سیلف ڈرائیونگ گاڑیوں کے شعبے میں بھی یہ روبوٹ انقلاب برپا کر دے گا کیونکہ یہ وقت سے پہلے ہی بتا دے گا کہ گاڑی کو سڑک پر حادثہ پیش آنے والا ہے۔
روبوٹ تیار کرنے والی ٹیم کے سربراہ اسسٹنٹ پروفیسر سرگئی لیوین کا کہنا تھا کہ ”بالکل اسی طرح جیسے ہم خیال کرتے ہیں کہ ہمارے افعال ہمارے ماحول پر کس طرح اثرانداز ہوتے ہیں، بالکل اسی طریقے سے یہ روبوٹ مختلف رویوں کو بھانپ کر مستقبل میں دنیا پران کے اثرات کا اندازہ لگا لیتا ہے اور مستقبل کے متعلق پیش گوئی کرتا ہے۔“