’میں نے صرف اس ایک چیز کے بارے میں سوچ سوچ کر ہی کروڑوں روپے کمالئے‘ کروڑ پتی خاتون نے اپنی دولت کے پیچھے چھپا ایسا راز بتادیا کہ پوری دنیا دنگ رہ گئی

ڈیلی بائیٹس

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک)مفلوک الحالی سے کروڑ پتی بننا کوئی آسان کام نہیں لیکن برطانوی ٹی وی ’چینل 4‘ کے پروگرام ’آپ اتنے امیر کیسے ہوئے؟‘ میں میزبان کیتھرین ریان سے گفتگو کرتے ہوئے ایک خاتون نے اپنے کروڑ پتی بننے کا ایسا راز بتا دیا کہ پوری دنیا دنگ رہ گئی ہے۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق ’سو سٹون‘ نامی اس خاتون کو 1999ءمیں اس کے شوہر نے طلاق دے دی، اس وقت یہ بے تحاشا مقروض تھی، اس کے کریڈٹ کارڈ وغیرہ ختم ہو چکے تھے اور بینک نے اس کا گھر ضبط کرنے کی وارننگ جاری کر دی تھی۔ آج سو سٹون ارب پتی ہے اور وہ اپنی اس کامیابی کو اپنی مثبت سوچ کا نتیجہ قرار دیتی ہے۔

اس 16سالہ لڑکی نے اپنے جسم کی ایک ایسی چیزاتنی بڑی کرلی ہے کہ اس کے پاس آنے سے پہلے بار بار سوچنا پڑتا ہے
سو سٹون کا کہنا ہے کہ ”وہ زمانہ میری زندگی کا تلخ ترین زمانہ تھا۔ میرا بال بال قرضے میں جکڑا ہوا تھا اور اس پر طلاق کے بعد 3بچوں کا بوجھ بھی اکیلے مجھ پر آ پڑا تھا۔ میں بہت خوفزدہ تھی کہ اب میرا مستقبل کیا ہو گا۔ اگلے روز میں اٹھی تو میں نے خودکلامی کے انداز میں اپنے آپ سے کہا کہ ’اٹھو سو سٹون! تمہیں اپنی زندگی کو تبدیل کرنا ہے۔‘ اس کے بعد میں نے سیلف ہیلپ پر مبنی کتابیں پڑھنی شروع کر دیں۔ ان میں ’مثبت سوچ‘ کی طاقت کے متعلق بہت کچھ درج تھا جس نے مجھے بہت متاثر کیا۔چنانچہ میں نے اپنی سوچ پر کام شروع کر دیا اور خود کو مثبت اور مختلف سوچنے کی تربیت دینے لگی۔اس کے بعد میں تحریکی مقرر بن گئی اور لوگوں کو مثبت سوچ کی طاقت کے متعلق لیکچر دینے شروع کر دیئے۔میں نے لوگوں کو مثبت سوچنے کی تربیت اور ترغیب فراہم کرکے یہ تمام رقم کمائی ہے۔“