’میرے کپڑے کہاں گئے۔۔۔‘ نیم برہنہ تصویر سوشل میڈیا پر لگانے کے بعد پاکستانی نژاد اداکارہ کو قتل کی دھمکیاں، ان کے جواب میں کونسی تصویر لگادی؟ ایسی تصویر کہ سوشل میڈیا پر طوفان آگیا

ڈیلی بائیٹس

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) کچھ روز قبل آسٹریلوی مسلمان خاتون سکالر امِ جمال الدین نے فتویٰ جاری کیا تھا کہ خواتین کا اپنی بھنوﺅں کے بال اکھاڑ کر انہیں خوبصورت بنانا حرام ہے۔ اس فتوے کے جواب میں پاکستانی نژاد برطانوی اداکارہ سائرہ خان نے بکنی میں اپنی تصویر پوسٹ کی اور سکالر کو شرمناک القابات سے پکارا، جس پر اداکارہ کو انٹرنیٹ پر قتل کی دھمکیاں ملنے لگیں۔ اب ان دھمکیوں کے جواب میں اس نے مزید ایسی کئی شرمناک تصاویر پوسٹ کر دی ہیں۔

’جب میرا شوہر مجھے چپیڑ مارتا ہے تو میں۔۔۔‘ مسلمان گلوکارہ کے گانے نے دنیا میں طوفان برپا کردیا، ایسی شرمناک بات کہہ دی کہ خواتین کا غصہ آسمان پر جاپہنچا
میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق 47سالہ سائرہ خان نے ایک بار پھر ’بکنی‘ میں اپنی کئی تصاویر پوسٹ کر دی ہیں جن میں اسے ساحل سمندر پر مختلف حالتوں میں دکھایا گیا ہے۔ اس نے مسلم خاتون سکالر کے فتوے کے جواب میں پوسٹ کی تھی اور اب اس کا کہنا ہے کہ یہ تصاویر انٹرنیٹ پر قتل کی دھمکیوں کا جواب ہیں۔ ان تصاویر کے ساتھ اس نے دھمکیاں دینے والوں کو مزید زچ کرنے کے لیے لکھا ہے کہ ’اب میرے کپڑے کہاں گئے۔“اداکارہ کی نئی تصاویر نے بھی انٹرنیٹ پر ہنگامہ برپا کر رکھا ہے اور بہت سے لوگ اس کی حمایت جبکہ کئی مخالفت کر رہے ہیں۔