’اس خاتون نے میرے ساتھ یہ انتہائی شرمناک حرکت کی اور میری۔۔۔‘ خاتون اپنی سہیلی کے خلاف عدالت چلی گئی، الزام کیا لگایا؟ جان کر مَردوں کے بھی شرم سے گال لال ہوجائیں

ڈیلی بائیٹس

ممبئی (نیوز ڈیسک) خود کو مغربی ممالک کے ہم پلہ سمجھنے والا بھارت معاشی و سماجی میدان میں تو ترقی یافتہ ممالک کے قریب بھی نہ پہنچ سکا، البتہ اخلاقی زوال میں یہ مغربی دنیا سے بھی آگے نکلتا دکھائی دیتا ہے۔ ممبئی کی عدالت میں پیش کئے گئے ایک مقدمے سے بخوبی اندازہ کیا جاسکتا ہے کہ بھارتی معاشرہ کس طرف جارہا ہے۔
ٹائمز آف انڈیا کی رپورٹ کے مطابق ممبئی شہر سے تعلق رکھنے والی ایک خاتون شکایت لے کر عدالت میں پیش ہوگئی کہ اس کی سہیلی نے اس کی قابل اعتراض تصویر سوشل میڈیا پر پوسٹ کردی تھی۔ پولیس نے معاملے کی تفتیش شروع کی تو پتا چلا کہ دونوں خواتین، جن کی عمر 45 سال ہے، ممبئی کے ایک معروف نجی ہسپتال کے پتھالوجی ڈیپارٹمنٹ میں کام کرتی ہیں اور گزشتہ 10 سال سے ایک دوسرے کی شریک حیات بن کر اکٹھی رہ رہی تھیں۔ ممبئی پولیس کے ایک سینئر افسر کا کہنا تھا کہ ان کے پاس اس نوعیت کا کیس پہلی بار آیا ہے۔

دنیا کا شرمناک ترین ہوٹل کھولنے کا فیصلہ جہاں جسم فروش خواتین سے بھی دو قدم بڑھ کر ایسی سہولت مہیا کی جائے گی کہ سن کر ہی انسان توبہ پر مجبور ہوجائے
تفتیشی افسر کا کہنا تھا کہ ان میں سے ایک خاتون شادی شدہ تھی، لیکن جب اس کی خاوند سے علیحدگی ہوگئی تو دونوں نے ایک دوسرے کی شریک حیات بن کر رہنا شروع کردیا۔ چھ ماہ قبل ان کے درمیان تلخی کا آغاز ہوا تو متاثرہ خاتون کو پتہ چلا کہ اس کی سہیلی ذاتی نوعیت کی تصاویر کا سوشل میڈیا پر ناجائز استعمال کررہی تھی۔ شکایت درج کروانے والی خاتون کا یہ بھی کہنا تھا کہ ملزمہ نے اس کی برہنہ تصویر اپنے واٹس ایپ ڈسپلے سٹیٹس کے طور پر پوسٹ کی تھی۔ ملزمہ مزید قابل اعتراض تصاویر سوشل میڈیا پر پوسٹ کرنے کی دھمکیاں دے رہی تھی، جس پر متاثرہ خاتون نے پولیس سے رابطہ کر لیا۔