نریندرا مودی اسرائیل پہنچ گئے ،تل ابیب ائیرپورٹ پر اسرائیلی وزیراعظم کا اعلیٰ حکام کے ہمراہ شاہی استقبال ،ہندوستان اور اسرائیل فطری اتحادی ہیں:نیتن یاہو

بین الاقوامی

تل ابیب / نئی دہلی(ڈیلی پاکستان آن لائن)بھارتی وزیر اعظم نریندرا مودی تین روزہ دورے پر اسرئیل پہنچ گئے ،ائیرپورٹ پر اسرائیلی وزیر اعظم بنجمن نیتن یاہو اور دیگر اعلیٰ حکام کا پر تپاک استقبال،بھارت اور اسرائیل فطری دوست ہیں ،یہ میری خوش قسمتی ہے کہ میں اسرائیل آنے والا پہلا بھارتی وزیر اعظم ہوں،مودی کی اسرائیلی وزیر اعظم سے گفتگو۔
بھارتی نجی ٹی وی چینل ’’این ڈی ٹی وی ‘‘ کے مطابق نریندرا مودی ہندوستانی تاریخ میں اسرائیل کا دورہ کرنے والے پہلے وزیر اعظم بن گئے ،تل ابیب ائیرپورٹ پر نریندرا مودی کا شاہی استقبال ،اسرائیلی وزیر اعظم بنجمن نیتن یاہو نے اعلیٰ حکام کے ساتھ اپنے بھارتی ہم منصب کا ریڈ کارپٹ استقبال کیا ،بھارتی ٹی وی نے دعویٰ کیا ہے کہ اسرائیل پہنچنے پر نریندرا مودی کا ویسے ہی استقبال کیا گیا جیسے پوپ یا پھر امریکی صدور کا کیا جا تا ہے ۔تل ابیب ائیرپورٹ پر بنجمن نیتن یاہو نے مودی کو گلے لگا کر ہندی زبان میں کہا خوش آمدید میرے دوست،بھارت ہمارا گہرا دوست ہے ،بھارتی وزیر اعظم کا اسرائیل کا سفر تاریخی ہے ، ہم بھارت اور بھارت کی ثقافت سے محبت کرتے ہیں،بھارتی اور اسرائیلی فطری دوست ہیں۔اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے نریندرا مودی کا کہنا تھا کہ یہ میری خوش قسمتی ہے کہ میں اسرائیل آنے والا پہلا بھارتی وزیر اعظم ہوں، اسرائیل آنے پر میرے اس خوبصورت استقبال اور خود میرے دوست پی ایم بنجمن نیتن یاہو کے ایئر پورٹ پر موجود رہنے کا شکریہ، میرا یہ دورہ دونوں ممالک کے مضبوط تعلقات کی علامت ہے، بھارت کی تہذیب بہت پرانی ہے، لیکن ہمارا ملک نوجوان ہے، ہمارے نوجوان تبدیلی کی طاقت جبکہ دہشت گردی دونوں ممالک کے لئے خطرہ ہے ۔واضح رہے کہ کسی بھی ہندوستانی وزیر اعظم کا اسرائیل کا یہ پہلا دورہ ہے، دونوں ممالک کے دو طرفہ تعلقات کے لحاظ سے یہ دورہ انتہائی اہم سمجھا جا رہا ہے، جس پر دنیا بھر کے بہت سے ممالک کی نگاہیں بھی ٹکی ہیں۔اس دورے میں وزیر اعظم مودی اپنے ہم منصب بنجمن نیتن یاہو کے ساتھ دہشت گردی سے نبٹنے جیسے مشترکہ چیلنجز اور اقتصادی تعلقات کو فروغ دینے کے حوالے سے تبادلہ خیال کریں گے۔اس دورے میں نریندرا مودی اسرائیل کے صدر روین ریولین سے بھی ملیں گے. وہ 1918 میں ہلاک ہونے والئے ہندوستانی فوجیوں کی یادگاروں پرپھول بھی چڑھائیں گے۔بھارتی وزیر اعظم مودی کے اس دورے کے دوران بھارت اور اسرائیل کے سفارتی تعلقات کے 25 سال بھی پورے ہو رہے ہیں، مودی 6 جولائی تک اسرائیل میں رہیں گے جس کے بعد وہ جی ۔20 اجلاس میں حصہ لینے کے لئے جرمنی کے شہر ہیمبرگ روانہ ہو جائیں گے۔