کشمیر پر نہیں، پاکستانی قوم کے انڈیا کے ساتھ ضم ہونے پر ریفرنڈم کرا یا جائے ،کشمیر کو دنیا کی کوئی طاقت بھارت سے الگ نہیں کر سکتی:انڈین وزیر داخلہ راجناتھ سنگھ کی ہرزہ سرائی

بین الاقوامی

نئی دہلی(ڈیلی پاکستان آن لائن)بھارتی وزیر داخلہ راجناتھ سنگھ نے ہمیشہ کی طرح پاکستان کے خلاف زبان درازی کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان کشمیر پر ریفرنڈم چاہتا ہے لیکن اسے یہ دیکھنے کے لئے پاکستان میں ایک ریفرنڈم کرانا چاہئے کہ کیا اس کے اپنے لوگ اسی ملک میں رہنا چاہتے ہیں یا بھارت میں ضم ہونا چاہتے ہیں؟مقبوضہ کشمیر کو ایک بار پھر ہندوستان کا اٹوٹ انگ قرار دیتے ہوئے راجناتھ سنگھ کا کہنا تھا کہ کشمیر بھارت کے ساتھ تھا اور اسکے ساتھ ہی رہے گا ، دنیا کی کوئی بھی طاقت اسےہندوستان سے الگ نہیں کرسکتی۔

مزید پڑھیں:TapMad نے ہمہ وقت سرگرم رہنے والوں کے لئے انٹرٹینمنٹ کی نئی دنیا متعارف کروادی

’’دی انڈین ایکسپریس‘‘ کے مطابق ریاست اترکھنڈ کے ضلع ہردوار میں ایک عوامی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے راجناتھ سنگھ نے کہاکہ اب پاکستان کشمیر پر ریفرنڈم چاہتا ہے لیکن ایک بات واضح ہے کہ کشمیر بھارت کے ساتھ تھا اور اسکے ساتھ ہی رہے گا ،کوئی بھی طاقت اسے تبدیل نہیں کرسکتی،پاکستان کویہ دیکھنے کیلئے اپنے ملک میں ایک ریفرنڈم کرانا چاہیے کہ کیا اسکے لوگ اسی ملک میں رہنا چاہتے ہیں یا بھارت کے ساتھ ضم ہوناچاہتے ہیں؟۔راجناتھ سنگھ نے پاک بھارت دوطرفہ تعلقات کی خرابی کا ذمہ دار پاکستان کو ٹھہراتے ہوئے کہاکہ میں پاکستان کو یہ بتانا چاہتا ہوں کہ بھارت ہمیشہ پرامن تعلقات قائم کرنا چاہتا ہے لیکن یہ صرف اسلام آباد ہی ہے جو ان تعلقات میں خلل ڈالنے کی کوشش کررہا ہے اسے دہشتگردوں اور کشمیر پر ریفرنڈم کرانے کا مطالبہ کرنے والوں کو روکنے کی ضرورت ہے۔

مزید پڑھیں:شادی کے سیزن میں اس چیز سے بال دھونے سے ان میں ایسی چمک آئے گی کہ سب آپ کی تعریف کرنے پر مجبور ہوجائیں گے

راجناتھ سنگھ نے بڑھک مارتے ہوئے کہاکہ سرجیکل سڑائیکس کے ذریعے ہم نے دنیا کو دکھایا ہے کہ ہم ایک سخت قدم بھی اٹھا سکتے ہیں،بھارت ایک پرامن ملک ہے لیکن اب یہ ایک نرم قوم نہیں رہا۔بھارتی وزیر داخلہ نے ہندوستان کے خلاف سازشیں کرنے والے ممالک کو خبردار کرتے ہوئے کہاکہ اگر کسی نے بھی ہمیں چھونے کی کوشش کی ہم اسے معاف نہیں کریں گے۔