مدھیہ پردیش میں بچیوں سے زیادتی پر پھانسی کا قانون منظور

بین الاقوامی

نئی دہلی (ویب ڈیسک)بھارتی ریاست مدھیہ پردیش کی اسمبلی نے کم عمر بچیوں کے ساتھ زیادتی کرنے والوں کوسزائے موت دینے کا قانون منظور کرلیا ہے۔ریاست کے وزیر اعلیٰ شیو راج چوہان نے کہا ہے کہ عورتوں سے زیادتی کرنے والے جانوروں سے بھی بدتر ہیں۔میڈیا ذرائع کے مطابق قانون کے تحت چھیڑ چھاڑ، دست درازی کی سزا 3 سال اور جرمانہ ہوگی جبکہ اگر ایسا جرم دوسری بار بھی ہوا تو سزا 7سال تک دی جاسکے گی۔قانون کی رو سے جو لوگ 12سال سے کم عمر کی بچیوں کے ساتھ زیادتی کرتے ہیں ،ان کو اب موت یا عمر قید کی سزا دی جاسکے گی۔قانون میں موجود ایک شق کے مطابق شادی کا جھانسہ دے کر تعلقات قائم کرنے والو ں کو 3 سال کے لیے جیل جانا ہوگا۔

ڈیلی پاکستان کے یو ٹیوب چینل کو سبسکرائب کرنے کیلئے یہاں کلک کریں