امریکی سفارتخانے کی بیت المقدس منتقلی کا اعلان کرتے ہوئے ٹرمپ کا لہجہ بوکھلایا ہوا اور اٹک اٹک کر کیوں بول رہے تھے؟ ایسا انکشاف کہ انٹرنیٹ پر تہلکہ برپاہوگیا

بین الاقوامی

واشنگٹن(مانیٹرنگ ڈیسک) امریکی صدر ڈونلڈٹرمپ نے گزشتہ شب پوری مسلم امہ کے تحفظات کو بالائے طاق رکھتے ہوئے یہودیوں کو نواز دیا اور یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرتے ہوئے امریکی سفارت خانے کو تل ابیب سے یروشلم منتقل کرنے کا اعلان کر دیا ہے۔ ان کے اس فیصلے سے دنیا، بالخصوص عرب دنیا کے حالات پر کیا منفی اثرات مرتب ہوں گے اس سے قطع نظر، ان کی گزشتہ شب کی تقریر کو دیکھا جائے تو یہ اعلان کرتے ہوئے ان کی زبان لڑکھڑا رہی تھی، ان کے منہ سے الفاظ مبہم انداز میں ادا ہو رہے تھے، اور حتیٰ کہ وہ اپنے ملک امریکہ کا نام بھی ٹھیک سے نہیں لے سکے۔ اس پر دنیا بھر میں ان کا ٹھٹھہ لگایا جا رہا ہے اور امریکی دندان سازوں نے اس پر ایسا انکشاف کر دیا ہے کہ سن کر ہر کوئی دنگ رہ گیا۔

”ایک مسلمان کیساتھ ایسا شرمناک ترین کام ہوتے دیکھا کہ بھارتی ہونے پر شرم محسوس ہونے لگی“ بھارتی ہندوپولیس افسر کے انکشاف نے پوری دنیا کو ہلا کر رکھ دیا
میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق تقریر کے آخر میں جب ڈونلڈٹرمپ نے ”یونائیٹڈ سٹیٹس“ کے الفاظ ادا کیے تو ان کے منہ سے ”یونائیٹڈ ششٹیٹس “ کے لفظ نکلے۔ اس کے علاوہ بھی انہوں نے تقریر کے دوران کئی الفاظ غیرواضح طور پر ادا کیے جیسے کہ ان کی گھگھی بندھی ہوئی ہو۔ اس سے امریکہ کے دندان سازوں ایک انتہائی حیران کن نکتہ اٹھایا۔ انہوں نے کہا کہ ڈونلڈٹرمپ نے دانتوں کی مصنوعی بتیسی لگا رکھی ہے اور اس بتیسی میں مسئلہ آنے کی وجہ سے انہیں لفظوں کی ادائیگی میں دشواری ہوئی۔

ڈیلی پاکستان کے یو ٹیوب چینل کو سبسکرائب کرنے کیلئے یہاں کلک کریں
اس کے جواب میں وائٹ ہاﺅس کے ترجمان کا کہنا ہے کہ صدر ٹرمپ کا حلق خشک ہونے کی وجہ سے یہ مسئلہ ہوا۔ تاہم ترجمان کی طرف سے دندان سازوں کے دعوے کی تردید نہیں کی گئی۔امریکی ریاست ورجینیا کے ایک دندان ساز نے میل آن لائن سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ ”میں نے تقریر کو بغور دیکھا ہے اور اس نتیجے پر پہنچا ہوں کہ ڈونلڈٹرمپ کی بتیسی مصنوعی ہے اور وہ ڈھیلی ہونے کی وجہ سے ان کی آواز میں لڑکھڑاہٹ آئی اور وہ غلط الفاظ ادا کرتے رہے۔جب مصنوعی بتیسی ڈھیلی ہو جائے تو ایسا ہوتا ہے۔“

ویڈیو دیکھیں: