امریکہ نے دنیا کی تاریخ کی سب سے بڑی جنگ چھیڑنے کی تیاری مکمل کرلی، امریکی صدر نے حکم دے دیا، کس ملک پر حملہ ہوگا؟ جان کر پاکستانیوں کے رنگ اُڑجائیں گے کیونکہ۔۔۔

بین الاقوامی

واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک) امریکہ اور شمالی کوریا کی قیادت میں طویل عرصے سے دھمکیوں کا تبادلہ ہوتا آ رہا ہے اور اب امریکی صدر ڈونلڈٹرمپ نے شمالی کوریا کو اب تک کی سنگین ترین دھمکی دے دی ہے، جس سے کورین خطہ آگ کی لپیٹ میں آنے کے امکانات دوچند ہو گئے ہیں۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق ڈونلڈٹرمپ نے کہا ہے کہ ”میگزینیںرائفلوں میں چڑھ چکی ہیں اور گولیاں چیمبرز میں لوڈ ہو چکی ہیں، اب اگر کم جونگ ان نے امریکہ کو ایک بھی کھلی دھمکی دی تو اسے بہت پچھتانا پڑے گا۔“اس سے قبل امریکی صدر نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر امریکی فوج کی پیسیفک کمانڈ کی طرف سے کی جانے والی ایک ٹویٹ کو ری ٹویٹ بھی کیا جس میں کمانڈ نے لکھا تھا کہ ”اگر حکم ملے تو ہمارے بی 1بی سپرسانک نیوکلیئر بمبار آج رات ہی کارروائی کرنے کے لیے تیار ہیں۔“

’یورپی مغربی دنیا میں ہر جگہ برف جم جائے گی اور ایک بھی جاندار نہ رہے گا اگر۔۔۔‘ سائنسدانوں نے اعلان کردیا، سب سے بڑے خطرے کے بارے میں خبردار کردیا
امریکی صدر نے اپنی دھمکی میں کہا ہے کہ ”اگر شمالی کوریا کوئی احمقانہ اقدام اٹھایا تو اس کے بعد امریکہ ایسا کام کرے گا جو اس سے قبل دنیا میں کسی نے نہیں دیکھا ہو گا۔“دوسری طرف شمالی کوریا کی طرف سے بھی ایک نیا بیان سامنے آیا ہے۔ سنٹرل نیوز ایجنسی کے ذریعے جاری کیے گئے اس بیان میں کہا گیا ہے کہ ”ڈونلڈٹرمپ کورین خطے کو ایٹمی جنگ کی طرف دھکیل رہے ہیں۔امریکہ کی طرف سے جنگ کے خطرے کو رد کرنے کی بجائے اس کے برعکس بیانات آنے سے ظاہر ہوتا ہے کہ امریکی خود کورین خطے میں ایٹمی جنگ کے ماسٹرمائنڈ اوردنیا کو اس تباہی کی طرف دھکیلنے کے خواہش مند ہیں۔“
واضح رہے کہ صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے امریکی صدر ڈونلڈٹرمپ نے جنوبی امریکہ کے ملک وینزویلا میں بھی فوجی آپشن استعمال کرنے کا عندیہ دے دیا ہے جہاں اس وقت حکومتی عدم استحکام کے باعث خانہ جنگی کی صورتحال پیدا ہو چکی ہے۔