پاکستانی ڈاکٹر عالمی ادارہ صحت کے خصوصی کمیشن کی سربراہ مقرر

بین الاقوامی

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) عالمی ادارہ صحت نے غیر متعدی امراض سے متعلق اعلی سطح کا گلوبل کمیشن قائم کرنیکا اعلان کردیا جبکہ پاکستانی خاتون ڈاکٹر ثانیا نشتر عالمی کمیشن کی سربراہ مقرر کر دی گئیں ہیں۔

طالبان کے چنگل سے بازیاب کرائے گئے غیرملکی جوڑے کے ہاں دوران قید 3بچوں کی پیدائش ہوئی
تفصیلات کے مطابق عالمی ادارہ صحت نے غیرمتعدی امراض کے حوالے سے عالمی کمیشن بناتے ہوئے پاکستان ڈاکٹر ثانیا نشتر کو کمیشن کا سربراہ مقرر کردیا ہے، وہ کمیشن کی سربراہی کے دوران دنیا بھر میں غیر متعدی امراض سے اموات کے وجوہات کو ختم کرنے سے متعلق طریقوں کی نشاندہی کریں گی۔ عالمی ادارہ صحت کے ڈائریکٹر جنرل ٹیڈروس اڈھیم کا کہنا ہے کہ اگر ہم غیر متعدی امراض سے لوگوں کی غیر ضروری اموات کو روکنا چاہتے ہیں تو ہمیں فوری طور پر نئے نقطہ نظر اور عمل کی ضرورت ہے۔ اس مقصد کے حصول اور صحت کے چیلنجوں پر قابو پانے کیلئے ہم نے دنیا کے بہترین پروفیشنل لوگوں کو شامل کیا ہے۔ کمیشن کی سربراہ ڈاکٹر ثانیا نشتر پاکستان میں سابق نگراں وزیر اور سول سوسائٹی کی سرگرم کارکن رہی ہیں۔