عالمی عدالت کافیصلہ کلبھوشن کے خاندان اور ملک کیلئے بڑی راحت کا باعث بن کر سامنے آیا :بھارتی وزیر خارجہ

بین الاقوامی

نئی دہلی (یو این پی)بھارتی وزیر خارجہ سشما سوراج نے عالمی عدالت انصاف کے فیصلے کا خیرمقدم کیا اور وزیر خارجہ سشما سوراج نے ٹویٹر اکاونٹ پر کہا کہ عالمی عدالت انصاف کا فیصلہ کلبھوشن جادھو کے خاندان اور ملک کے باشندگان کے لئے بڑی راحت کا باعث بن کر سامنے آیا ہے۔انہوں نے دوسری ٹویٹ میں کہا کہ میں قوم کو یقین دلانا چاہتی ہوں کہ وزیر اعظم نریندر مودی کی قیادت میں ہم کلبھوشن جادھو کو بچانے میں کوئی کسر نہیں چھوڑیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ہم ہریش سالوے کے شکرگزارہیں کہ انہوں اس کیس کو عالمی عدالت انصاف کے سامنے مضبوطی سے پیش کیا ۔ ساتھ ہی، ہم وزارت خارجہ کی اپنی ٹیم کے بھی ممنون ہیں جنہوں نے اس معاملے کو انجام تک پہنچانے میں انتہائی جدوجہد اور محنت سے کام کیا۔واضح رہے کہ جمعرات کو عالمی عدالت انصاف نے کے جج رونی ابراہم نے اپنے فیصلے میں پاکستان کو کلبھوشن جادھو کی پھانسی دینے سے باز رہنے کا حکم دیتے ہوئے کہا کہ "عالمی عدالت یہ حکم دینا مناسب سمجھتی ہے کہ ہماری طرف سے حتمی فیصلہ سنائے جانے تک پاکستان کلبھوشن جادھو کو پھانسی دینے سے بچانے کی ہرممکن تدبیر کرے۔ پاکستان میں فوجی عدالت کی طرف سے کلبھوشن جادھو کو سزائے موت سنائے جانے کے بعدبھارت نے اس معاملے کو ہیگ میں واقع عالمی عدالت انصاف میں اٹھایا تھا۔