احتساب عدالت پہنچتے ہی کیپٹن صفدر نے لیگی کارکن سے ایسی بات پوچھ لی کہ بیچارے کے ہوش اڑ گئے، جان کر آرمی چیف جنرل باجوہ کو بھی اپنے شاگرد پر شدید غصہ آجائے گا

اسلام آباد

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) کیپٹن (ر) صفدر احتساب عدالت میں پیشی کے بعد واپس اپنے سمدھی کے گھر پہنچ چکے ہیں لیکن اپنی پیشی کی کچھ یادیں پیچھے چھوڑ گئے ہیں۔
نجی ٹی وی دنیا نیوز کے مطابق کیپٹن (ر) صفدر اپنی اہلیہ سے کچھ دیر پہلے احتساب عدالت میں پہنچے اور جیسے ہی وہ کمرہ عدالت میں پہنچے تو انہیں وہاں ایک شخص کھڑا ہوا نظر آیا۔ کیپٹن صفدر اس شخص کے پاس گئے اور سیدھا ہی سوال داغ دیا کہ ’ تم کس ایجنسی کے بندے ہو ؟ تمہارا تعلق آئی ایس آئی سے ہے یا ایم آئی سے؟‘ ۔ کیپٹن صفدر کے اس اچانک سوال پر انجان شخص گڑ بڑا گیا تاہم اس نے اپنے حواس پر قابو کرتے ہوئے بتایا کہ وہ مسلم لیگ ن کا کارکن ہے ۔ لیکن کیپٹن صفدر نے پھر اپنا سوال دہرایا جس پر اس نے کہا ’ جناب میں اپنا ہی بندہ ہوں، آپ کی نشستیں ریزرو کرانے آیا تھا‘۔ یہ جواب پانے کے بعد کیپٹن (ر) صفدر اپنی نشست پر بیٹھ گئے۔

یہ خبر بھی پڑھیں: جنرل قمر جاوید باجوہ کو آرمی چیف بنوانے کیلئے کیپٹن صفدر نے کیا کردار ادا کیا، اور دونوں کا آپس میں کیا رشتہ ہے؟انتہائی حیران کن انکشاف سامنے آگیا
واضح رہے کہ کیپٹن (ر) صفدر کے چبھتے سوالوں کا نشانہ بننے والا لیگی کارکن احتساب عدالت میں مریم نواز ، کیپٹن صفدر اور سینیٹر پرویز رشید کی نشستوں کے سلسلے میں کمرہ عدالت میں موجود تھا۔