احتساب عدالت کے باہر پولیس اہلکار پر تشدد کرنے والے وکیل کا ن لیگ سے کیا تعلق ہے اور وہ کہاں سے آیا تھا؟ ایسا تہلکہ خیز انکشاف منظرعام پر آگیا کہ پوری پی ٹی آئی دنگ رہ جائے گی

اسلام آباد

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) مریم نواز اور کیپٹن (ر) صفدر کی احتساب عدالت میں پیشی کے موقع پر شدید بد نظمی دیکھنے میں آئی ، اس موقع پر وکلا نے پولیس اہلکاروںکو تشدد کا نشانہ بھی بنایا جس کی ویڈیو بھی منظر عام پر آچکی ہے ۔ ویڈیو میں واضح طور پر دیکھا جاسکتا ہے کہ کیسے مسلم لیگ ن کا ایک اہم عہدیدار وکیل پولیس اہلکار کو تھپڑ ماررہا ہے۔

”میرے گھر میں چار بہنیں قتل ہوگئیں، پولیس کو رشوت دینے کے لیے جسم سے یہ چیز بھی نکال کردے دی لیکن۔۔۔ “پنجاب کے بڑے شہر سے ایسی ویڈیو منظر عام پر آگئی کہ دیکھ کر آپ کی آنکھوں سے بھی آنسو جاری ہو جائیں گے
نجی ٹی وی 92 نیوز کے مطابق پولیس اہلکار کو تھپڑ مارنے والا شخص ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل پنجاب کے عہدے پر فائز ہے اور پارٹی کیلئے خدمات کے اعتراف میں اسے یہ اہم ترین عہدہ دیا گیا ہے۔ ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل پنجاب بننے سے پہلے خاور اکرام مسلم لیگ ن لائرز فورم کے جنرل سیکرٹری اور صدر بھی رہ چکے ہیں۔ منظر عام پر آنے والی ویڈیو میں ایڈووکیٹ خاور اکرام کو انسپکٹر شکیل کو تھپڑ مارتے ہوئے دیکھا جاسکتا ہے۔

ویڈیو دیکھیں