سینیٹر ساجد میر کی وفاقی وزرا کے ہمراہ مولانا فضل الرحمن سے ملاقات ،مولانا ابوتراب کی بازیابی کے حوالے سے تفصیلی مشاورت

اسلام آباد

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)مرکزی جمعیت اہل حدیث بلوچستان کے امیر مولانا علی محمد ابو تراب کے اغوا کے بعد سینیٹر ساجد میر نے ان کی بازیابی کے لئے کوششیں تیز کر دیں ،وفاقی وزیر داخلہ کے بعد جے یو آئی ف کے امیر مولانا فضل الرحمن سے ملاقات،مولانا ابوتراب کی بازیابی کے ممکنہ اقدامات پر مشاورت،وفاقی وزرا ڈاکٹر عبد الکریم اور سردار محمد یوسف بھی ہمراہ تھے ۔

مزید پڑھیں:حج کے دوران پاکستان کے معاہدے ذیلی کمپنیرکے ساتھ تھے ،سعودی حکومت کا ان سے کوئی سروکار نہیں:سعودی سفیر

تفصیلات کے مطابق سینیٹر پروفیسر ساجد میر نے مولاناعلی محمد ابو تراب کے اغوا کے بعد اسلام آباد میں ڈیرے ڈال لئے وفاقی وزیر داخلہ احسن اقبال سے ملاقات کے بعد وفاقی وزارا سردار محمد یوسف اور ڈاکٹر حافظ عبد الکریم کے ساتھ  جمعیت علمائے اسلام ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمن سے ملاقات کرتے ہوئے انہیں مولانا ابوتراب کے اغوا کے واقعہ سے مکمل آگاہ کرتے ہوئے ان کی بازیابی کے لئے ممکنہ اقدامات کے حوالے سے تفصیلی مشاورت کی ۔اس موقع پر مولانا فضل الرحمن نے کہا کہ مولانا ابوتراب تمام مسالک میں احترام کی نگاہ سے دیکھے جاتے ہیں ، ان کا اغوا باعث تشویش ہے ،جمعیت علماء اسلام واقعہ کی شدید الفاظ میں مذمت کرتی ہے اور ان کی بازیابی کے لئے ہر ممکنہ کوشش کرے گی ۔انہوں نے کہا کہ دینی جماعتوں کے اہم افراد کو اس طرح دن دیہاڑے اغوا کئے جانا ملک بھر کی دینی طبقے کے لئے باعث تشویش ہے ۔