کراچی میں3روزہ انسداد پولیو مہم کا آغاز

کراچی

کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن)کراچی میں کچھ مہینوں کے وقفے کے بعدپولیو کے مرض سے نجات کی مہم پیر سے شروع ہو گئی ہے۔اس کا مقصد ان و الدین تک رسائی حاصل کرنا ہے جنہوں نےاپنے بچوں کو  پولیو ویکسین دینے  سے انکار کیا تھا۔
تفصیلات کے مطابق کمشنر کراچی اعجاز احمد خان نے جنوبی ضلع کے ایک میٹرنٹی ہوم میں پولیو ویکسین مہم کا باقاعدہ آغاز کیا۔میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کمشنر کراچی کا کہنا تھا کہ گزشتہ ایک سال کے عرصے میں کوئی ایک بھی پولیو کا کیس رپورٹ نہیں ہوا، اس کا کریڈٹ ہیلتھ ورکرز اور بچوں کے والدین کو جاتا ہے۔ پولیو سیل کے ترجمان کے مطابق 3روزہ انسداد پولیو مہم کراچی کی 161یونین کونسلز میں 18لاکھ سے زائد بچوں تک رسائی حاصل ہو گی۔ مہم میں حصہ لینے والے ہیلتھ ورکرز کی سیکورٹی کیلیے 5000سے زیادہ پولیس اور رینجرز اہلکارمامور ہوں گے۔ اس مہم کا بنیا دی مقصد ان بچوں کو پولیو ویکیسن کی فراہمی کرنا ہے جن کے والدین انسداد پولیو ویکسین سے گھبراتے ہیں۔

لاوارث لاشوں کی شناخت ، چوری شدہ موبائل فونز کی تصدیق کیلئے2 نئی ویب سائٹس کا آغاز
ماہرین صحت کا کہنا ہے کہ اگر والدین اپنے بچوں کو صحت مند مستقبل دینا چاہتے ہیں تو انہیں اپنے بچوں کو ہر مہم میں پولیو ویکسین دلوانی چاہیے تاکہ اس موذی مرض سے چھٹکارا ممکن ہو