ہائیکورٹ :پٹرولیم مصنوعات پر17فیصد سے زائد سیلز ٹیکس وصول کرنے پر وفاقی حکومت اور اوگرا کو نوٹس جاری

لاہور

لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائیکورٹ کے ڈویژن بنچ نے پٹرولیم مصنوعات پر17فیصد سے زائد سیلز ٹیکس عائد کرنے کے خلاف انٹرا کورٹ اپیل پر وفاقی حکومت اور اوگرا کو نوٹس جاری کردیئے ہیں،درخواست گزار ایڈوکیٹ اظہر صدیق نے موقف اختیار کیا کہ عالمی منڈی میں خام تیل کی قیمتوں میں کمی واقعی ہوئی، وفاقی حکومت نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کی بجائے سیلز ٹیکس میں غیر قانونی طور پر اضافہ کردیا،انہوں نے کہا کہ قانون کے مطابق 17فیصد سے زائد سیلز ٹیکس وصول نہیں کیا جاسکتا ،حکومت نے پیٹرولیم مصنوعات پر اضافی سیلز ٹیکس عائد کردیا ہے جس کی قومی اسمبلی اور کابینہ سے منظوری بھی نہیں لی گئی جو کہ سپریم کورٹ کے احکامات کی سنگین خلاف ورزی ہے،پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں ردوبدل کرنا اوگرا کا اختیار ہے مگر وفاقی حکومت غیر قانونی طور پر اوگرا کا اختیار استعمال کر رہی ہے، انہوں نے استدعا کی کہ عدالت سنگل بنچ کے فیصلے کو کالعدم قرار دیتے ہوئے عدالتی فیصلہ آنے تک حکم امتناعی جاری کرے جس پر عدالت نے وفاقی حکومت اور اوگرا کو 30 اکتوبر کے لئے نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیاہے۔