پراوینشل مینجمنٹ سروس کے امتحانات میں خواتین کا کوٹہ مختص نہ کرنے پرجواب طلب

لاہور

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہور ہائیکورٹ نے پراوینشل مینجمنٹ سروس کے امتحانات میں خواتین کا کوٹہ مختص نہ کرنے کے خلاف دائر درخواست پرچیئرمین پنجاب پبلک سروس کمیشن اورحکومت سے جواب طلب کرلیاہے۔

لاہورکالج برائے خواتین یونیورسٹی کی وائس چانسلرپروفیسرڈاکٹرعظمیٰ قریشی کی اہلیت لاہورہائیکورٹ میں چیلنج

جسٹس عائشہ اے ملک نے سارہ احمد کی درخواست پرسماعت کی،درخواست گزار کے وکیل افراسیاب موہل نے موقف اختیار کیا کہ پنجاب پبلک سروس کمیشن نے خواتین کا کوٹہ مختص نہیں کیا جبکہ معذوراورخواتین کا کوٹہ مقررکیا گیا ہے۔ خواتین کاکوٹہ مختص نہ کرنا ان سے آئینی حق چھیننے کے مترادف ہے۔انہوں نے کہا کہ آئین پاکستان کے تحت کسی شہری کے ساتھ امتیازی سلوک نہیں برتا جا سکتا۔درخواست گزار نے استدعا کی کہ پراوینشنل مینجمنٹ سروس کے امتحانات میں خواتین کا کوٹہ مختص کرنے کاحکم دیا جائے جس پر عدالت نے چیئرمین پنجاب پبلک سروس کمیشن اورحکومت کونوٹس جاری کرتے ہوئے دوہفتوں میں جواب طلب کر لیاہے۔