فوڈسکیورٹی کیلئے شعبہ زراعت کو جدید خطوط پر استوار کرنیکی حکمت عملی تیار ،

لاہور

لاہور ( خصوصی رپورٹ)یو ایس ایڈ کے تعاون سے پنجاب اینیبلنگ انوائرمنٹ پراجیکٹ اور پنجاب فوڈ ڈیپارٹمنٹ صوبائی شعبہ زراعت کوجدید خطوط پر استوار کرینگے۔خورا ک کے عالمی معیارات کے مطابق فوڈ سکیورٹی یقینی بنانے ، قیمتوں میں استحکام لانے سمیت بین الاقوامی معیار کے مطابق بیجوں کی سٹوریج کیلئے 200نئے مراکز قائم کئے جائینگے۔ اس منصوبہ میں سرمایہ کاری کیلئے پہلا سیمینارلاہو رچیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری میں ہواجس میں نجی سرمایہ کاروں ، پرائیویٹ سیکٹر کے شیئر ہولڈرز نے گندم کی بوری سے گودام تک منتقلی و ذخیرہ کرنے کے عمل میں سرمایہ کاری میں دلچسپی کا اظہار کیا ،مذکورہ سیمینار میں سیکرٹری پنجاب فوڈ ڈیپارٹمنٹ شوکت علی نے منصوبے پر روشنی ڈالی،انکا کہنا تھا صوبائی حکومت فوڈ سکیورٹی کیلئے اس بات کو یقینی بنانا چاہتی ہے کہ گندم کوکھیت کھلیانوں کے نزدیک تر ہی ذخیزہ کرنے کی کسان کو سہولیات مہیا کی جائیں جس کیلئے 200سے زائد گودام پبلک اور پرائیویٹ سیکٹر کی شراکت سے قائم کئے جائینگے جن میں دو ملین میٹرک ٹن خوراک محفوظ و ذخیرہ کی جا سکے گی ۔انکا کہنا تھا کہ یہ اہداف حاصل کرنے میں یو ایس ایڈ پبلک اینڈ پرائیویٹ سیکٹر کی شراکت داری کو یقینی بنانے میں مکمل معاونت کرے گی۔
فوڈ سکیورٹی ‎