حافظ سعید کی نظر بندی پر تحریک انصاف اور جماعت اسلامی نے پنجاب اسمبلی کے اجلاس کا بائیکاٹ کردیا

قومی

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن )پاکستان تحریک انصاف اور جماعت اسلامی نے جماعت الدعوة کے امیر حافظ سعید کی نظر بندی پر لیگی حکومت کے خلاف شدید احتجاج کیا اور پنجاب اسمبلی کے اجلاس کا بائیکاٹ کردیا ۔ان کا کہنا ہے کہ غیر ملکی دباﺅ پر جھک کر حافظ سعید جیسے مخلص پاکستانی کو نظر بند کیا گیا ہے جس کی سخت الفاظ میں مذمت کرتے ہیں ۔

چند روز قبل پاک فوج کی قید سے رہائی پانے والے بھارتی فوجی نے ”نئی داستان“ سنا دی، ایسے الزامات عائد کر دئیے کہ جان کر آپ کو بھی شدید غصہ آئے گا
جماعت اسلامی کے رکن صوبائی اسمبلی ڈاکٹر وسیم اختر کی درخواست پر تحریک انصاف اور جماعت اسلامی نے پنجاب اسمبلی کے اجلاس سے کا بائیکاٹ کیا ۔ان کا کہنا تھا کہ حافظ سعید نے کشمیر کے معاملے کو اب تک زندہ رکھا ہے اور ان کی زیر نگرانی چلنے والی فلاح انسانیت نے معاشرے میں بہت اچھا کردار ادا کیا ہے ۔انہوں نے مطالبہ کیا کہ حافظ سعید کو فوری طور پر رہا کیاجائے ۔ادھر پنجاب اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر محمود الرشید نے کہا کہ اس اقدام سے ظاہر ہوتا ہے کہ لیگی حکومت غیر ملکی دباﺅ کے آگے جھک گئی ہے ۔پوائنٹ آف آرڈر محمود الرشید نے کہا لیگی حکومت نے بھارت اور امریکہ کے دباﺅ میں آکر حافظ سعید کے خلاف کارروائی کی ہے ۔ان کا کہنا تھا کہ کوئی بھی حافظ سعید کی حب الوطنی پر شک نہیں کر سکتا ،انہیں مقبوضہ کشمیر کے لوگوں کے لیے آواز اٹھانے پر سزا دی جا رہی ہے ۔