کلبھوشن یادیوکیس، عالمی عدالت انصاف میں ایڈہاک جج کی تقرری ، پاکستانی وفد کی آئی سی جے کے صدر سے ملاقات

قومی

دی ہیگ (ڈیلی پاکستان آن لائن)کلبھوشن یادیو کیس کے سلسلے میں عالمی عدالت انصاف میں ایڈہاک جج کی تقرری کے لئے پاکستان کے 5رکنی وفد نے آئی سی جے کے صدر سے ملاقات کی۔ وفد کی قیادت اٹارنی جنرل آف پاکستان اشتر اوصاف نے کی، ملاقات میں ایڈہاک جج کی تقرری کے علاوہ پاکستانی اٹارنی جنر ل نے بھارتی جاسوس کمانڈر کلبھوشن کیس کی ٹائم لائن پر بھی گفتگو کی گئی۔

شیخ رشید پر ن لیگ نے منصوبہ بندی کے تحت حملہ کرایا، جے آئی ٹی پر تنقید بارے پیر کو سپریم کورٹ جائیں گے: عمران خان
اٹارنی جنرل آفس کے جاری کردہ بیان کے مطابق اٹارنی جنر ل آف پاکستان اشتر اوصاف کی قیادت میں پاکستان کے پانچ رکنی وفد جن میں ڈی جی ساو¿تھ ایشیا ڈاکٹر فیصل، بیرسٹر خاور قریشی اور 2 دیگر وکلاءشامل تھے نے عالمی عدالت انصاف کے صدر سے ملاقات کی، وفد نے عالمی عدالت انصاف کے صدر کو آئی سی جے میں پاکستانی ایڈہاک جج کی تعیناتی سے آگاہ کیاہے ۔ملاقات میں کیس کے طریقہ کار پر گفتگو کی گئی جبکہ پاکستان کی جانب سے عالمی عدالت کو کلبھوشن کیس جلد نبٹانے کے لئے استدعا کی گئی ہے۔ اس پر عالمی عدالت انصاف کے صدر نے بھارت اور پاکستان سے کلبھوشن یادیو کیس پر تحریری مﺅقف اور ٹائم فریم طلب کر لیا ہے۔

پیپلز پارٹی نے تحریک انصاف کی تین وکٹیں اڑا دیں
نجی ٹی وی چینل ”سماءنیوز “ نے دعوی کیا ہے کہ عالمی عدالت انصاف میں کلبھوشن یادیو کے معاملہ پر پاکستان نے ایڈہاک جج کی تعیناتی کیلئے 3 نام فائنل کرلئے ہیں اس حوالے سے پاکستان نے سابق چیف جسٹسز ناصر الملک، صدق حسین جیلانی اور سابق اٹارنی مخدوم علی کے نام تجویز کئے ہیں۔