ریلوے سے گھوسٹ ملازمین کا خاتمہ ، اب ملازمین چہرے کی شناخت کے نظام کے تحت حاضری لگائیں گے: خواجہ سعد رفیق

قومی

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق نے کہا ہے کہ ریلوے سے گھوسٹ ملازمین کے خاتمے اور پراکسی حاضری کا قلع قمع کرنے کے لئے چہرے کی شناخت کے ذریعے حاضری لگانے کا نظام متعارف کرا دیا ہے ، اب ریلوے کے تمام ملازمین Face  Recognition  System کے ذریعے ہی اپنی حاضریاں لگا سکیں گے۔

کوئی ٹیکنو کریٹ حکومت پاکستان کے مسائل حل نہیں کر سکتی :وزیراعظم
سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ”ٹوئٹر“ پر ٹوئٹس کے ذریعے وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق کا کہنا تھا کہ پاکستان ریلویز میں چہرے کی شناخت کے ذریعے حاضری کا کمپیوٹرائزڈ نظام لایا جارہا ہے۔ ڈائریکٹوریٹ آف انفارمیشن اینڈ ٹیکنالوجی میں چہرے کی شناخت کے ذریعے کمپیوٹرائزڈ حاضری کے جدید نظام کی تجرباتی بنیادوں پر تنصیب کامیاب رہی ہے اور اس جدید نظام کے ذریعے حاضری لگانے کی وجہ سے گھوسٹ ملازمین اور پراکسی حاضری کا قلع قمع ہو جائے گا۔ان کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان ریلوے چہرے کی شناخت کے ذریعے حاضری لگانے والا پہلا سرکاری محکمہ ہوگا، حاضری مشینوں کی CCTV کیمروں سے حفاظت یقینی بنائی جائے گی جبکہ ورکشاپوں میں محنت کش ہاتھوں پر نشانات کے باعث بائیو میٹرک حاضری نہیں لگاسکتے لیکن حاضری کی جدید ڈیوائسز چہرے کی عینک کےساتھ بھی شناخت کر سکیں گے۔