کراچی میں شیعہ برادری کا قتل قائداعظم محمدعلی جناحؒ کے قتل کے مترادف ہے : الطاف حسین

سیاست
0

لندن (مانیٹرنگ ڈیسک ) متحدہ قومی موومنٹ کے سربراہ الطاف حسین نے کہا ہے کہ بانیِ پاکستان قائد اعظم محمد علی جناحؒ کا تعلق شیعہ مسلک سے تھا محض شیعہ ہونے کی وجہ سے کراچی میں شہریوں کا قتل قائد اعظمؒ کے قتل کے مترادف ہے۔لندن میں اپنے ایک بیان میں ان کا کہنا تھا کہ قائد اعظم محمد علی جناح ؒ پہلے اسماعیلی فرقے سے تعلق رکھتے تھے جبکہ بعد میں اثنائے عشری مسلک اختیار کیا۔
ایم کیوایم کے قائد الطاف حسین نے کہا کہ قائد اعظم محمد علی جناحؒ نے اپنے مسلک میں تبدیلی کا حلف نامہ 1898ءمیں ممبئی کی عدالت میں جمع کرایا اور قائد اعظم محمد علی جناحؒ کے ہمراہ ان کی بہن محترمہ فاطمہ جناح نے بھی مسلک میں تیدیلی کا حلف نامہ جمع کرایا تھا۔ انہوں نے بتایا کہ قائد اعظم محمد علی جناحؒ کی میت کو حاجی کلو نے غسل دیا جو کہ شیعہ اثنا ئے عشری تھے جبکہ اس تناظر میں محض شیعہ ہونے کے باعث کراچی میں شہریوں کا قتل قائد اعظم محمدعلی جناحؒ کا قتل ہے۔