گوردوارہ بی با سنگھ 70 سال بعد کھول دیا گیا

گوردوارہ بی با سنگھ 70 سال بعد کھول دیا گیا
گوردوارہ بی با سنگھ 70 سال بعد کھول دیا گیا

  


پشاور (ویب ڈیسک) تقسیم برصغیر پاک و ہند کے بعد بند کئے گئے پشاور ہشت نگری میں واقع سکھوں کی مذہبی عبادت گاہ گوردوارہ بی با سنگھ 70 سال بعد مذہبی عبادت کےلئے کھول دیا گیا۔ گوردوارے کا افتتاح مسلم لیگ (ن) کے رہنما صدیق الفاروق نے کیا۔ پشاور کی سکھ کمیونٹی، خیبر پی کے، فاٹا اور بھارت سے سکھ برادری کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔ خیبر ایجنسی کے گوپال سنگھ کا کہنا تھا کہ یہ دن ان کےلئے عید کی طرح ہے اور اس میں ہم مسلم لیگ ن، صوبائی اور ضلعی حکومت اور محکمہ اوقاف کے بے حد شکرگزار ہیں۔ دہلی (بھارت) سے آئے ہوئے بلویندر سنگھ کا کہنا تھا کہ میں یہ گوردوارہ دیکھ بہت ہی خوش ہوں۔ وزیراعلیٰ خیبر پی کے کے اقلیوں کے امور کے مشیر سورن سنگھ نے بی بی سی کو بتایا کہ یہ گوردوارہ رنجیت سنگھ کے دور میں تعمیر کیا گیا تھا۔ چیئرمین وقف املاک بورڈ صدیق الفاروق نے کہا کہ مسلم لیگ ن حکومت کی پالیسی ہے کہ اقلیتوں کو ان کے تمام حقوق دیئے جائیں۔

مزید : پشاور


loading...