بہتر طرز حکمرانی میں پنجاب اور خیبر پختونخوا برابر ،غربت کے خاتمے میں پنجاب کا پہلا نمبر

بہتر طرز حکمرانی میں پنجاب اور خیبر پختونخوا برابر ،غربت کے خاتمے میں پنجاب ...

اسلام آباد(خصوصی رپورٹ)پلڈاٹ نے صوبائی سکور کارڈ برائے معیار طرز حکمرانی 2014-15 کی جائزہ رپورٹ جاری کر دی ہے ۔ پلڈاٹ کی جانب سے جاری کر دہ جائزہ رپورٹ میں انکشاف ہوا ہے کہ صوبوں میں طرز حکمرانی کے میعار میں بتدریج بہتری آرہی ہے ۔ پنجاب اور خیبر پختونخواکی حکومتوں نے 2013کے بعد دوسرے سال میں معیار طرز حکمرانی میں کارکردگی کے حوالے سے 68فیصد یکساں اسکور حاصل کیا ہے ۔رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ یہ ایک خوش آئندہ امر ہے خیبر پختونخوا اور پنجاب کی دونوں حکومتوں نے جائزے کے 25پیرامیٹرز میں 50فیصد مثبت سکور حاصل کیاہے جبکہ سندھ اور بلوچستان کی حکومتوں نے 20پیرامیٹرز میں 50فیصد سے زیادہ مثبت اسکور حاصل کیا ہے تاہم چار پیرا میٹرز میں کارکردگی مایوس کن رہی جبکہ ایک پر برابر چلتی رہی ہے ۔ خیبر پختونخوا ہ میں ماحولیاتی پائیداری کے پیرا میٹرز میں 82فیصد سکور لیکر دوسروں پر سبقت لی ہے جبکہ پنجاب نے غربت خاتمے کے پیرامیٹر میں80.4فیصد مثبت سکور لیکر دوسرے صوبوں کو پیچھے چھوڑ دیا ہے ۔ جائزہ رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ صنفی امتیاز کے پیرا میٹر میں کے پی کے نے 51جبکہ پنجاب نے 52.9فیصدر ہی ہے جو کم ترین سطح بتائی جاتی ہے ۔ پلڈاٹ کے جائزہ کے مطابق سندھ حکومت 59فیصدسکور کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہی جبکہ بلوچستان حکومت 58فیصد کے ساتھ چوتھے نمبر پر رہی ہے ۔ بلوچستان حکومت نے اقتدار کی نچلی سطح تک منتقلی کے پیرامیٹرمیں 77.7فیصد حاصل کی ہے کیونکہ صوبے نے دیگر صوبوں کی نسبت سب سے پہلے انتخابات کا انعقاد کرتے ہوئے حکومتوں کا قیام عمل میں لایا۔ پبلک ٹرانسپورٹ کے پیرامیٹر میں بلوچستان کی کارکردگی 41.3فیصد کے ساتھ کم ترین رہی جس میں سندھ حکومت نے 78.3فیصد سکور حاصل کیاہے ۔ سندھ حکومت صنفی امتیاز کے حوالے کارکردگی سب سے کم رہی ۔پنجاب حکومت نے شفاف ،موثر اوراکنامک پبلک پکیورمنٹ کے پیرامیٹر میں 84.8فیصد مثبت سکور لیکر دوسروں پر سبقت لی ہے ۔ پلڈاٹ کی جانب سے 2013سے لیکر اہم پیرامیٹرز میں صوبائی حکومتوں کی کارکردگی کا ایک مجموعی جائزہ پیش کیا ہے ۔

مزید : صفحہ اول


loading...