بحرانوں کا حل نظام مصطفی کے نفاذمیں مضمر ہے ،معراج الہدیٰ صدیقی

بحرانوں کا حل نظام مصطفی کے نفاذمیں مضمر ہے ،معراج الہدیٰ صدیقی

کراچی(اسٹاف رپورٹر)مسلک ، رنگ و نسل کی بنیاد پر قوم کی تقسیم مغرب کا مذموم ایجنڈا ہے۔ علماء و مشائخ اور عوام مصطفوی ﷺنظام کے نفاذ کے لئے دینی قوتوں کا ساتھ دیں ۔ان خیالات کا اظہار امیر جماعت اسلامی سندھ ڈاکٹر معراج الہدی صدیقی نے موسی لین بغدادی میں جامعتہ الانصار کی چوتھی سالانہ تقسیم انعامات کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر ناظم اعلی جمعیت اتحاد العلماء کراچی مولانا عبدالوحید، نگراں جامعتہ الانصار مولانا عبدالواحد، مدیر جامعہ امام نعمان حبیب احمد حنفی ، مولانا فیصل عادل،وائس چیئرمین یوسی بغدادی محمد فرحان، راجہ سلطان عارف و دیگر علماء و مشائخ کرام بھی موجود تھے۔ڈاکٹر معراج الہدی نے مزید کہا کہ اسلام امن کا مذہب ہے۔ دہشت گردی کا مذہب یا کسی بھی مسلک سے کوئی تعلق نہیں ہے اور بے گناہ انسانوں کی جان لینے والے انسانیت کے بدترین دشمن ہیں۔ انہوں نے کہا قوم کو در پیش مسائل اور ملک کو بحران سے نجات دلانے کے لئے کلمہ کی بنیاد پر حاصل کی گئی دھرتی پر نظام مصطفی ﷺکا نفاذ واحد اور آخری حل ہے۔ مدیر جامعتہ الاخوان مولانا عبدالوحید نے کہا کہ امریکی ایماء پر شدت پسندی اور انتہا پسندی کا لیبل لگا کر مدارس کو بدنام کرنے والے اسلام کے دشمن ہیں۔ مولانا عبدالواحد نے کہا کہ ملکی تعلیمی اداروں میں موثر تعلیمی نظام اور بہترین تربیت سے ہی مستقبل میں نظام مصطفی کی راہ ہموار ہوگی۔مولانا حبیب احمد حنفی نے کہا مدارس ریاست کا اہم ستون اور طالب علم وارثین انبیاء ہیں۔ پرنسپل جامعتہ الانصار مولانا فیصل عادل نے کہا کہ جامعتہ الانصار فروغ علم دین کے ذریعے معاشرے میں اسلامی اقدار کی ترویج میں مصروف عمل ہے ۔ آخر میں داکٹر معراج الہدی نے کامیاب طالب علموں میں لیپ ٹاپ ،شیلڈ اور میڈلز تقسیم کئے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...