ہائی کورٹ نے تلور کے شکار کے پرمٹ رکھنے والے عرب شہزادوں کی فہرست طلب کرلی

ہائی کورٹ نے تلور کے شکار کے پرمٹ رکھنے والے عرب شہزادوں کی فہرست طلب کرلی
ہائی کورٹ نے تلور کے شکار کے پرمٹ رکھنے والے عرب شہزادوں کی فہرست طلب کرلی

  


لاہور(نامہ نگار خصوصی)لاہور ہائیکورٹ نے تلور کے شکار کے خلاف درخواست پر وزارت خارجہ کی طرف سے جواب داخل نہ کروانے پر سخت برہمی کا اظہار کرتے ہوئے وفاقی حکومت سے پرمٹ رکھنے والے عرب شہزادوں اور شخصیات کی فہرست طلب کر لی ہے۔مسٹرجسٹس سید منصور علی شاہ نے نسیم صادق کی درخواست پر سماعت کی، عدالت نے استفسار کیا کہ تلور کے شکار سے متعلق سپریم کورٹ کا بھی کوئی فیصلہ آیا ہے، اس فیصلے میں کیا کہا گیا ہے؟جس پر درخواست گزار کی طرف سے سردار کلیم الیاس ایڈووکیٹ سپریم کورٹ کا فیصلہ پیش کرتے ہوئے کہا کہ سپریم کورٹ کے فیصلے میں کہیں نہیں لکھا ہے کہ تلور کا شکار جائز ہے، میڈیا نے سپریم کورٹ کے فیصلے کی غلط رپورٹنگ کی ہے، وکیل نے نکتہ اٹھایا کہ عدالت نے 23جنوری 2014ئکو وزارت خارجہ کو حکم دیا تھا کہ تلور کے شکار کے لئے جن عرب شخصیات کو پرمٹ جاری کئے گئے ہیں ان کی فہرست پیش کی جائے لیکن دو برس گزرنے کے باوجود یہ فہرست اور جواب عدالت میں پیش نہیں کئے جا رہے جس پر عدالت نے جواب اور فہرست پیش نہ کروانے پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے وفاقی حکومت کو حکم دیا کہ پرمٹ رکھنے والے عرب شہزادوں اور شخصیات کی فہرست 17اپریل تک عدالت میں پیش کی جائے۔ 

مزید : لاہور


loading...