تبدیلی سرکار کے پاس عوام کو مشکل سے نکالنے کیلئے کوئی پروگرام نہیں: امیر مقام

تبدیلی سرکار کے پاس عوام کو مشکل سے نکالنے کیلئے کوئی پروگرام نہیں: امیر مقام

  

الپوری (ڈسٹرکٹ رپورٹر) پاکستان مسلم لیگ(نواز) صوبہ خیبرپختونخوا کے صدر انجینئرامیرمقام نے کہا ہے کہ عوام کو مشکل حالات سے نکالنے کے لئے تبدیلی سرکار کے ساتھ کوئی پروگرام نہیں ہے، وزیراعظم نے روزانہ کی بنیاد پر قوم سے خطاب پر اکتفا کرکے مشکلات میں گرے ہوئے لوگوں سے منہ موڑلیاہے قوم کو کچھ دینے کے بجائے ان سے چندہ اکھٹاکرنے والوں کو ڈیم چندہ کاحساب دیناہوگا، مسلم لیگ ن اس مشکل وقت میں قوم کیساتھ ہیں ن لیگ کے صدر شہباز شریف خود حالات مانیٹر کرتے ہوئے ذاتی وسائل استعمال کررہے ہیں کورونا وائرس کامقابلہ زبانی جمع خرچ سے نہیں بلکہ عملی اقدامات سے ہی ممکن ہے۔ان خیالات کااظہار انھوں نے شانگلہ شاہ پور میں پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما امیر زیب خان، جانی ملک کی والدہ کی فاتحہ خوانی اورپورن ہسپتال کے دورہ کے موقع پرمیڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا، اس موقع پر پورن ہسپتال کے ایم ایس ڈاکٹر عبدالغفور نے اب تک اٹھائے جانیوالی اقدامات بارے ان کو بریفنگ دی انجینئرا میر مقام نے ہسپتال کے ساتھ مکمل تعاون اور کورونا وائرس کے حوالے سے مشکل حالات میں مقابلہ کرنے پر ڈاکٹرز اور پیرا میڈیکس کی کردار کو سراہا اور اس سلسلے میں اپنی طرف سے ہرممکن تعاؤن کی یقین دہانی کرائی، امیرمقام نے واضح کیا کہ حکومت کورونا کے حوالے سے بالکل غیرسنجیدہ ہے۔ جبکہ وزیراعظم نے روزانہ کی بنیاد پر قوم سے خطاب پر اکتفا کرتے ہوئے اصل مسئلہ سے منہ موڑچکاہے ان کے قول وفعل میں تضاد ہے اور ان سے کسی خیرکی توقع رکھنا عبث خیالی ہے انھوں نے کہا کہ ڈاکٹرز، پیرامیڈیکس، پولیس اور پاک فوج کے جوان اس مشکل میں قوم کا بھر پور ساتھ دے رہی ہے جس پر ہم اُن کو خراج تحسین پیش کرتے ہیں، انھوں نے کہا کہ ہر ضلع میں سکریننگ لیبارٹری قائم کی جائے،خیبر پختونخوا کے مزدورں خصوصاً کوئلہ کے کانوں اور ملک کے مختلف حصوں میں کام کرنے والوں کو واپس لانے کا انتظام کیا جائے ان کی سکریننگ، ٹرانسپورٹ کا انتظام کیاجائے،انہوں نے کہا کہ آج ڈالر کی قیمت ایک ہفتہ میں 170روپے تک پہنچ چکی ہے ان لوگوں نے ڈالر کی قیمت بڑھاکر قوم کی جیبوں پر ڈاکہ ڈالا ہے جبکہ وزیراعظم قوم سے خطاب کے دوران مصیبت زدہ لوگوں کو کچھ دینے کے بجائے ان سے چندہ اکھٹے کرنے کااعلان کردیاہے جو لوگوں کے ساتھ مذاق کی مترادف ہے۔ انھوں نے کہا کہ قوم سے مزیدچندہ اکھٹے کرنے کے بجائے ڈیم تعمیرکرنے کے نام پر لوگوں سے اکھٹاکرنیوالے چندہ کی بھی قوم کو حساب دیناہوگا۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -