سندھ حکومت نے عوام سے دوبارہ سخت احتیاط برتنے کی اپیل کردی

سندھ حکومت نے عوام سے دوبارہ سخت احتیاط برتنے کی اپیل کردی

  

کراچی(اسٹاف رپورٹر)ترجمان سندھ حکومت بیرسٹر مرتضی وہاب نے ایک اہم ویڈیو بیان کے زریعے صوبے بھر کے عوام سے ایک مرتبہ پھر سخت احتیاط برتنے کی اپیل کی ہے اپنے بیان میں بیرسٹر مرتضی وہاب نے کورونا وائرس سے دنیا بھر میں پھیلنے والی تباہی اور اس سے بچاؤ کے لئے حفاطتی اقدامات پر عمل کرنے پر زور دیا اور کہا کہ کورونا وائرس نے دنیا بھر میں تباہی مچائی ہوئی ہے۔ اس خطرناک وباکا تاحال کوئی علاج دریافت نہیں ہوا ہے ہمیں اس عالمی وباسے بچاو کے لئے صرف اور احتیاط برتنی ہے۔ترجمان سندھ حکومت نے بتایا کہ احتیاط یہ ہے کہ ہم اپنے گھروں پر رہیں سندھ حکومت کی حفاظتی اقدامات سے متعلق ہدایات پر ہر صورت عمل کریں ہمیں اپنے آپ سمیت ہر فرد کو محفوظ رکھنا ہے یہ ہماری نہ صرف قومی بلکہ دینی زمہ داری بھی ہے انہوں نے کہا کہ بلا ضرورت گھروں سے نکلنے سے وباء کے پھیلاو کا خطرہ ہے ہمیں صبر سے کام لینا ہے حکومت تنہا کچھ نہیں کرسکتی اس کام میں تمام سیاسی، مزہبی اور سماجی تنظینوں کے ساتھ ساتھ ہر فرد کو حکومت کا ساتھ دینا ہوگا سندھ حکومت این کی اوز کی مدد سے مستحقین میں راشن تقسیم کررہی ہے اس کے لئے ایک مربوط نظام وضع کرلیا گیا ہے صبر سے کام لینے کی ضرورت ہے انشااللہ ہم تمام مستحقین تک راشن پہنچائینگے بیرسٹر مرتضی وہاب نے کہا کہ مشکل وقت میں ہمیں ایک دوسرے کا سہارا بننا ہے اپنے پڑوسیوں کا خیال رکھنا ہے تاکہ کوئی بھوکا نہ رہے بیرسٹر مرتضی وہاب نے کہا کہ دنیا کی سپر پاور طاقتیں اس خطرناک وبا کے سامنے ڈھیر ہوگئی ہیں ترقی یافتہ ممالک کا صحت کا نظام کورونا وائرس کے سامنے ناکام ہوچکا ہے ایسے میں ہم پاکستانیوں کی پر بڑی زمہ داری عائد ہوتی ہے کہ وہ احتیاطی طریقہ کار کو اپنائیں ورنہ ایسا نہ ہو کہ خدانخواستہ بہت دیر ہوجائے۔ انہوں نے اس تناظر میں ایک اہم نکتے کی جانب توجہ دلائی اور کہا کہ سندھ میں کورونا وائرس کے اکتالیس مریض کا صحتیاب ہونا ہمارے سامنے ہے ان افراد نے صرف احتیاطی تدابیر اختیار کیں اور آئسولیشن میں رہے جسکی وجہ سے یہ افراد کورونا وائرس کا شکار ہوکر بھی الحمداللہ صحتیاب ہوگئے تو ہم بناء اس وباء کا شکار ہوئے اپنے گھروں پر رہ کر نہ صرف خود، اپنے اہل و عیال بلکہ پورے صوبے اور ملک کو محفوظ رکھ سکتے ہیں اللہ تعالی ہمارا حامی و ناصر ہو۔ آمین۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -