سپریم کورٹ نے کورونا سے بچاوَ کی وفاقی اور صوبائی حکومتوں سے رپورٹ طلب کرلی،نئے قیدیوں کی سکریننگ کا حکم

سپریم کورٹ نے کورونا سے بچاوَ کی وفاقی اور صوبائی حکومتوں سے رپورٹ طلب ...
سپریم کورٹ نے کورونا سے بچاوَ کی وفاقی اور صوبائی حکومتوں سے رپورٹ طلب کرلی،نئے قیدیوں کی سکریننگ کا حکم

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سپریم کورٹ نے کورونا سے بچاوَ کی وفاقی اور صوبائی حکومتوں سے رپورٹ طلب کرلی،سپریم کورٹ نے حفاظتی کٹس،دستیاب وینٹی لیٹرزکی تفصیلات،ڈاکٹرزاور طبی عملے کو تربیت کی رپورٹ طلب کرلی ،سپریم کورٹ کا جیلوں میں جانے والے تمام نئے قیدیوں کی سکریننگ کا حکم دیدیا۔

میڈیارپورٹس کے مطابق سپریم کورٹ نے کورونا سے بچاوَ کی وفاقی اور صوبائی حکومتوں سے رپورٹ طلب کرلی،عدالت نے حفاظتی کٹس،دستیاب وینٹی لیٹرزکی تفصیلات،ڈاکٹرزاور طبی عملے کو تربیت کی رپورٹ طلب کرلی،عدالت نے حکم دیا ہے کہ بتایا جائے ہسپتال کورونا سے نمٹنے کےلئے کس حد تک تیار ہیں۔

عدالت نے سرکاری ہسپتالوں میں مریضوں کےلئے ادویات اور بستروں کی دستیابی سے متعلق بھی رپورٹ طلب کرلی،سپریم کورٹ نے جیلوں میں جانے والے تمام نئے قیدیوں کی سکریننگ کا حکم دیدیا،عدالت نے کہاکہ مکمل سکریننگ کے بعد ہی قیدیوں کو جیل میں داخلے کی اجازت دی جائے،کسی قیدی میں کورونا کی علامات ظاہر ہوں تو اسے قرنطینہ کیا جائے۔

سپریم کورٹ نے بلوچستان اور سندھ کی جیلوں میں قرنطینہ مراکز قائم کرنے کا حکم دیتے ہوئے کہاکہ گلگت بلتستان اور اسلام آباد کی جیلوں میں بھی قرنطینہ مراکز بھی قائم کئے جائیں، پنجاب اورخیبرپختونخواکی جیلوں میں قرنطینہ مراکز قائم کیے جاچکے۔

مزید :

قومی -علاقائی -اسلام آباد -