"میں تبلیغی جماعت سے معذرت کرتا ہوں، جن لوگوں نے زیادتی کی ان کے ساتھ ۔۔۔" پرویز الہٰی نے دوٹوک اعلان کردیا

"میں تبلیغی جماعت سے معذرت کرتا ہوں، جن لوگوں نے زیادتی کی ان کے ساتھ ۔۔۔" ...

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) سپیکر پنجاب اسمبلی چوہدری پرویز الہٰی نے تبلیغی جماعت کے ارکان کے ساتھ پولیس کے رویے پر معذرت کی ہے اور کہا ہے کہ جس نے بھی ظلم کیا ہے اس کو انصاف کے کٹہرے میں لایا جائے گا اور سزا دی جائے گی۔

اپنے ایک ویڈیو پیغام میں چوہدری پرویز الہٰی کا کہنا تھا کہ تبلیغی جماعت انتہائی پرامن جماعت ہے، یہ پر امن ضرور ہے لیکن لاوارث نہیں ہے، امن کے داعی تبلیغیوں کے ساتھ ظلم و زیادتی قابل مذمت ہے۔ کیا کورونا اٹلی، امریکہ، سارے یورپ میں ان کی وجہ سے پھیلا ہے؟عقل کے اندھوں کو سمجھنا چاہیے۔

انہوں نے کہا کہ پولیس نے باہر سے آئے ہوئے لوگوں کو مارا ہے، جنہوں نے یہ زیادتی کی ہے اگر ان کے اپنے کسی بزرگ کو کورونا ہوجائے تو کیا اس کے ساتھ بھی اسی طرح کا سلوک کریں گے۔ پنجاب کے وزیر اعلیٰ نے تبلیغی جماعت کے حوالے سے بات ضرور کی لیکن اس پر عملدرآمد نہیں ہوا، سندھ کے اندر عمل ہوا ہے۔

سپیکر پنجاب اسمبلی نے مطالبہ کیا ہے کہ تبلیغ کرنے آئے لوگوں کو رائیونڈ بھیجا جائے اور وہاں ان کو سہولیات مہہیا کی جائیں، تبلیغ والوں سے معافی مانگی چاہیے۔تبلیغی جماعت کے لوگوں کے ساتھ جو زیادتی ہوئی ہے اس پر معذر خواہ ہوں، جنہوں نے زیادتی کی ہے ان کو سزا بھی دی جائے گی۔

چوہدری پرویز الہٰی کا کہنا تھا کہ جو لوگ تبلیغی جماعت کے خلاف پراپیگنڈا کر رہے ہیں وہ خدا کا خوف کریں، ایک مخصوص طبقہ اس پراپیگنڈے میں مصروف ہے اور جھوٹ کا سہارا لے رہا ہے، انہیں اپنا پراپیگنڈا بند کرنا چاہیے۔

مزید :

قومی -علاقائی -پنجاب -لاہور -کورونا وائرس -