محکمہ صحت،متعدد ملازمین کا تبادلہ،فوری رپورٹ کا حکم

محکمہ صحت،متعدد ملازمین کا تبادلہ،فوری رپورٹ کا حکم

  

راجن پور(تحصیل رپورٹر) ضلع راجن پور میں سفارش نہ ہونے پر متعدد ملازمیں جن میں ڈاکٹرز۔ ایل ایچ وی۔ ڈسپنر ودیگر عملہ شامل بیس سالوں سے دور دراز (بقیہ نمبر23صفحہ6پر)

علاقوں میں ڈیوٹی دے رہے تھے۔ سی ای او ہیلتھ راجن پور نے حکومت پنجاب کی تین سال ایک جگہ پر تعینات عملہ کی پالیسی کو مدنظر رکھتے ہوئے تمام ایسے ملازمیں جو بیس سال سے ایک جگہ پر کام کررہے تھے کو فوری طور پر تبدیل کر دیا ہے۔ بی ایچ یو کوٹلہ دیوان سے نصر ت ظفر کو تبدیل کرکے ہڑند جبکہ ہڑند سے شازیہ پروین کو کوٹلہ دیوان۔ رضیہ بتول ایل اے ڈبیلو کو کوٹلہ مغلاں سے جبکہ ثریا کو کوٹلہ مغلاں سے کوٹلہ دیوان۔  صغران گوہر ایل ایچ وی تتاروالا سے ٹی ایچ کیو جام پور سے تل شمالی۔ جبکہ تل شمالی سے امنہ پروین تتاروالا۔ رابعہ ذہرہ تتاروالا سے برڑے والا۔ رابعہ قاضی برڑے والا سے بخارہ۔ ریحانہ بی بی بخارہ سے سلیم اباد۔ فرہانہ یاسمین سلیم اباد سے ار ایچ سی فاضل پور۔ پروین صفی محمد پور سے حاجی پور۔ سمیرہ رانی حاجی پور سے محمد پور۔ سائرہ انجم فاضل پور سے ٹی ایچ کیو ہسپتال جام پور۔    اسی طرح عارضی ڈیوٹی پر ایل ایچ وی فوزیہ رزاق کو جام پو ر سے واپس کوٹلہ مغلاں۔ سلیم اکبر پتافی میڈیکل ٹیکنیشن کو اللہ آباد سے حضرت والا میں فرائیض دینے کے احکامات جاری کیے گئے ہیں۔ سی ای اوہیلتھ نے ہیلتھ سنٹرکے دورہ کے موقع پر میڈیا کو بتایا کہ کسی بھی ملازم کے خلاف ناروا سلوک نہیں کیا جائے گا۔ ایسے ملازمین جن کی سفارش نہ ہونے پر کئی سالوں سے دور نوکری کر رہے تھے کو ان کے قریبی علاقوں میں خدمت کا موقع دیا جائے گا۔ ضلع بھر کی ڈسپنریوں اور سب ہیلتھ سنٹروں کے ملازمین جوکہ کئی عرصہ سے کاغذوں میں حاضر تھے کے خلاف سخت ایکشن لیا جارہا ہے تمام ملازمین کا ڈیٹا اکٹھا کرکے نزدیکی ہیلتھ سنٹروں پر تعنات کیا جائے گا۔ ان شا اللہ ہیلتھ کے شعبہ میں تبدیلی نظر ائے گی۔ اور حکومتی رٹ کو ہر صورت قائم رکھا جائے گا۔ علاوہ ازیں ضلع بھر میں ڈیلوری سروس کو بہتر کرنے اور کرونا کے خاتمہ کے لیے کی جانے والی کاوشوں کا جائزہ لیا۔ 

حکم

مزید :

ملتان صفحہ آخر -