کبیروالا:رمضان بازار ویران،صارفین خالی ہاتھ واپس

کبیروالا:رمضان بازار ویران،صارفین خالی ہاتھ واپس

  

 خانیوال،اڈا جھلار مدینہ+بارہ میل (نمائندہ پاکستان،نامہ نگار) ماہ رمضان میں صارفین کو اشیائے خورد و نو ش کی سر کاری رعائتی نر خوں پر دستیابی کے لئے کبیروالا میں بنایا جانے والا رمضان با زارانتظامیہ کی سستی اورعدم دلچسپی کیوجۃ سے تاحال فعا ل نہ کیا جاسکا ہے رمضان بازار میں خر ید ا ر ی کے آنے والے صارفین خالی پھٹے دیکھ کر لوٹ جاتے ہیں م شہری حلقوں (بقیہ نمبر49صفحہ7پر)

 نے رمضان بازار ک قیام می سست روی پر احتجاج کرتے ہوئے ڈپٹی کمشنر خانیوال سے صورتحال کے فوری نوٹس لینے کامطالبہ کیا ہے۔   ڈپٹی کمشنر سلمان خان لودھی نے ماہ رمضان میں غریب اور بے آسرا افراد کیلئے مدنی افطار دسترخوان کے قیام پر کام شروع کردیا اور پرانی سبزی منڈی کے پلاٹ میں مدنی افطار دستر خوان کی تعمیر شروع کرادی ماہ رمضان میں مخیر حضرات کے تعاون سے مدنی  دستر خوان پر روزانہ 200 سے زائد افراد کی افطاری کا بندوبست ہوگا-ڈپٹی کمشنر نے ممبر بورڈ آف ریونیو محمد حیات لک کے ہمراہ افطار دستر خوان کی جگہ کا معائنہ کیا-اس موقع پر انہوں نے کہا کہ ضلعی انتظامیہ ماہ رمضان میں بے آسرا افراد کو تنہا نہیں چھوڑے گی مدنی دسترخوان کا سلسلہ رمضان کے بعد بھی جاری رکھا جائے گا-دیگر تحصیلوں میں میں رمضان دستر خوان قائم کئے جائینگے ممبر بورڈ ریونیو محمد حیات لک نے افطار دستر خوان کے قیام کے اقدام کو سراہا ہے۔وزارت داخلہ پنجاب کی جانب سے سوشل میڈیا کے ذریعے متنازعہ پیغامات کی ترسیل بابت اقدامات تیز کرتے ہوئے حساس اداروں کو بھی متحرک کردیا جبکہ ڈپٹی کمشنرز سے کہا گیا ہے کہ رمضان المبارک کی آمد کے پیش نظر مذہبی یا علاقائی کشیدگی بڑھانے کیلئے متنازعہ پیغامات کی رپورٹ ملتے ہی ملوث افراد کیخلاف سخت کارروائی کرتے ہوئے انہیں جیل میں بند کردیا جائے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -