ایندھن نہ ہونے سے کئی پاور پلانٹس بند، بجلی کا شارٹ فال 5300 میگا واٹ ہوگیا، رمضان سے پہلے انتہائی پریشان کن خبر آگئی

ایندھن نہ ہونے سے کئی پاور پلانٹس بند، بجلی کا شارٹ فال 5300 میگا واٹ ہوگیا، ...
ایندھن نہ ہونے سے کئی پاور پلانٹس بند، بجلی کا شارٹ فال 5300 میگا واٹ ہوگیا، رمضان سے پہلے انتہائی پریشان کن خبر آگئی
سورس: Pxfuel.com (creative commons license)

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) حالیہ چند دنوں سے ملک کے طول و عرض میں بجلی کی لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ ایک بار پھر شروع ہو گیا ہے اور ہر گزرتے دن کے ساتھ اس میں شدت آتی جا رہی ہے۔ انگریزی اخبار دی نیوز کے مطابق ایک طرف گرمی شروع ہونے پر بجلی کی طلب میں اضافہ ہو چکا ہے اور دوسری طرف ملک میں فیول کی کمی کا سامنا ہے، جس کے سبب بجلی کی لوڈ شیڈنگ کی جا رہی ہے۔

رپورٹ کے مطابق اس وقت ملک کے شہری اور دیہی علاقوں میں 3سے 10گھنٹے کی لوڈ شیڈنگ ہو رہی ہے۔ گزشتہ ہفتے کے دوران لوڈ شیڈنگ کے دورانیے میں زیادہ اضافہ دیکھنے میں آیا ہے، جب بجلی کا شارٹ فال 5ہزار میگا واٹ سے تجاوز کر گیا۔ پاور ڈسٹری بیوشن کمپنیز (ڈی آئی ایس سی او ز)کے ایک آفیسر کی طرف سے بتایا گیا ہے کہ گرمی کی شدت بڑھنے سے بجلی کی طلب میں اضافہ ہو رہا ہے اور اسی تناسب سے بجلی پیدا کرنے کے لیے ایندھن، بالخصوص فرنس آئل، ایل این جی اور کوئلہ میسر نہیں ہیں، چنانچہ شارٹ فال بڑھتا جا رہا ہے۔

نجی ٹی وی چینل جیو نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے لیسکو کے چیف ایگزیکٹو محمد امین نے بتایا ہے کہ اس وقت شارٹ فال 5300میگا واٹ ہو چکا ہے۔ کچھ پاور پلانٹس ایندھن نہ ہونے کی وجہ سے بند ہو چکے ہیں، جس کی وجہ سے شارٹ فال بڑھا۔ اگر ایندھن کی کمی واقع نہ ہوتی تو اس شارٹ فال سے بچا جا سکتا تھا۔ انہوں نے دعویٰ کیا کہ ایک آدھ دن میں یہ تمام پلانٹس پیداوار شروع کر دیں گے، جس کے بعد لوڈ شیڈنگ میں کمی واقع ہو گی۔

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -