حکومت کا پی ایس او کےلئے فرنس آئل 4 ماہ کے ادھار پر حاصل کرنے پرغور

حکومت کا پی ایس او کےلئے فرنس آئل 4 ماہ کے ادھار پر حاصل کرنے پرغور

اسلام آباد(آن لائن) حکومت پی ایس اوکو درپیش مالی بحران اور وصولیوں اور ادائیگیوں میں عدم توازن کے پیش نظر عالمی کمپنیوں سے فرنس آئل 4 ماہ کی ادھار پر حاصل کرنے پر غور کررہی ہے۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق سرکاری ذرائع کا کہنا ہے کہ وزارت پٹرولیم نے پی ایس او کےلئے طویل مدتی کریڈٹ کےلئے اقتصادی رابطہ کمیٹی سے رجوع کیا ہے۔ فی الحال پی ایس او 2 ماہ کی ادائےگی کی بنیاد پر فرنس آئل حاصل کررہا ہے۔اقتصادی رابطہ کمیٹی کو بھیجی گئی سمری میں وزارت پٹرولیم نے تجویز دی ہے کہ وزارت خزانہ کو پی ایس او کےلئے گارنٹی کی مدت 2 ماہ سے بڑھاکر 4 ماہ تک کردینی چاہئے۔ سرکاری عہدیدار کا کہنا ہے کہ ےہ عارضی اقدام ہوگا جو کہ زیرگردش قرضوں کے باعث اٹھایاجارہا ہے۔ پی ایس او کی واجب الوصول رقوم کا حجم 245 ارب روپے سے بڑھ گیا ہے۔ پی ایس او نے مقامی اور بین الاقوامی سپلائی کمپنیوں کو 147.7 ارب روپے ادا کرنے ہیں۔ ےہ تجاویز پاکستان اور بھارت کے مابین تیل کی تجارت سے متعلق مذاکرات کے بعد سامنے آئی ہیں اور بھارت نے پاکستان کو طویل مدتی کریڈٹ پر تیل فراہم کرنے کی پیشکشکی ہے۔

مزید : کامرس