نوجوان لڑکی نے 2 مردوں پر ریپ کا جھوٹا الزام لگادیا، ڈرامے کی اصل وجہ کیا تھی؟ جو جانے انتہائی پریشان ہوجائے

نوجوان لڑکی نے 2 مردوں پر ریپ کا جھوٹا الزام لگادیا، ڈرامے کی اصل وجہ کیا تھی؟ ...
نوجوان لڑکی نے 2 مردوں پر ریپ کا جھوٹا الزام لگادیا، ڈرامے کی اصل وجہ کیا تھی؟ جو جانے انتہائی پریشان ہوجائے

  

نئی دلی (نیوز ڈیسک) بھارتی شہر ساراوانم پتی میں پولیس کو اطلاع موصول ہوئی کہ ایک گرلز ہاسٹل میں ایک 22 سالہ لڑکی کو ریپ کا نشانہ بنایا گیا ہے، جس پر فوری کارروائی کی گئی لیکن حقیقت ایسی نکلی کہ جس پر یقین کرنا مشکل ہے۔ ریپ کا لفظ کسی بھی خاتون کیلئے ڈراؤنے خواب کی حیثیت رکھتا ہے مگر پولیس کو معلوم ہوا کہ مذکورہ لڑکی نے اپنے ساتھ یہ جرم نہ ہونے کے باوجود یہ مشہور کردیا کہ اس کا ریپ ہوگیا ہے۔

پولیس کو ملنے والی ابتدائی اطلاعات میں بتایا گیا کہ لڑکی کو ایک کرسی کے ساتھ باندھ کر زیادتی کا نشانہ بنایا گیا اور وہ بے ہوش حالت میں اپنے کمرے میں پائی گئی۔ پولیس کو بتایا گیا کہ 28 جولائی کی شام کو لڑکی کے والدین ہاسٹل پہنچے اور اسے اپنے ساتھ لے گئے۔

مزید پڑھیں:10 سال تک خاتون کو نامعلوم آدمی ای میلز کے ذریعے ریپ کرنے کی دھمکی دیتا رہا، حقیقت کھلی تو زندگی کا سب سے بڑا جھٹکا لگ گیا، مجرم بہت ہی قریبی نکلا

جب پولیس نے لڑکی سے معلومات حاصل کرنے کیلئے اس کے ساتھ بات چیت کی تو معاملہ گڑبڑ محسوس ہوا۔ جب لڑکی کو معاملے کی نزاکت اور قانونی نتائج سے خبردار کیا گیا تو اس نے حیرت انگیز انکشاف کیا کہ اس نے ریپ کا ڈرامہ کیا تھا۔ لڑکی نے بتایا کہ وہ 14 سال کی عمر سے ایک نوجوان کی محبت میں مبتلا ہے لیکن اس کے والدین رواں سال کے آخر میں اس کی شادی کسی اور شخص سے کرنا چاہ رہے تھے۔ اس نے شادی رکوانے کیلئے ریپ کا ڈرامہ کیا تاکہ کوئی بھی اسے شادی کیلئے قبول کرنے کو تیار نہ ہو اور بالآخر اس کا محبوب ’عصمت دری کا شکار ہونے والی لڑکی‘ سے شادی کرلے۔ پولیس کا کہنا ہے کہ لڑکی اور اس کے والدین کو سخت وارننگ دے دی گئی ہے کہ آئندہ ان کی طرف سے اس نوعیت کا مزید کوئی ڈرامہ سامنے نہ آئے، ورنہ قانونی کارروائی کی جائے گی۔

مزید : ڈیلی بائیٹس