مستقل وزیراعظم کیلئے شہباز شریف کے نام پر مسلم لیگ (ن )تذبذب کا شکار

مستقل وزیراعظم کیلئے شہباز شریف کے نام پر مسلم لیگ (ن )تذبذب کا شکار

لاہور (ایثار رانا) مسلم لیگ کے شاہد خاقان عباسی آج قومی اسمبلی کے 28ویں وزیراعظم منتخب ہوجائیں گے۔ تاہم مستقل وزیراعظم کے لئے شہباز شریف کے نام پر مسلم لیگ تذبذب کا شکار ہوتی نظر آرہی ہے۔ اس حوالے سے پنجاب کے وزراء اب کھلے عام اپنے خدشات کا اظہار کرتے نظر آتے ہیں۔ مسلم لیگ کے ایک بڑے حلقے کا موقف یہ ہے کہ ان کی طاقت اور شناخت پنجاب ہے اور میاں شہباز شریف کی انتھک محنت اور ترقیاتی منصوبوں نے ہمیشہ انتخابات میں مسلم لیگ کو ایک مضبوط پلیٹ فارم فراہم کیا ہے۔ سیاسی حلقوں کے مطابق مسلم لیگ اس کنفیوژن کا شکار ہے کہ میاں شہباز شریف کو قومی اسمبلی کے حلقے این اے 120 سے الیکشن لڑنے کے لئے پنجاب اسمبلی کی نشست سے مستعفی ہونا پڑے گا۔ پھر اس کا اگلا مرحلہ قومی اسمبلی کی نشست جیتنا اور پھر وزیراعظم کے لئے اعتماد کا ووٹ حاصل کرنا ہوگا۔ گو یہ تینوں مرحلوں میں میاں شہباز شریف کی کامیابی یقینی ہے۔ تاہم یہ ایک اعصاب شکن مرحلہ ہوگا اور موجودہ غیر یقینی صورتحال میں مسلم لیگ پنجاب کا مورچہ کسی کے حوالے کرنے پر کشمکش کا شکار ہے۔

مستقل وزیراعظم

مزید : صفحہ اول