صوبائی حکومت عوام کو سہولیات کی فراہمی میں ناکام ہو چکی:غلام علی

صوبائی حکومت عوام کو سہولیات کی فراہمی میں ناکام ہو چکی:غلام علی

پشاور (کرائمز رپورٹر) جے یوآئی کے مرکزی رہنماوسینیٹرحاجی غلام علی نے کہاکہ ہے نیا خیبر پختونخوا بنانے کادعوے کرنیوالے عوام کوبنیادی سہولیات بھی فراہم کرنے میں ناکام ہیں،اہلیان پشاورچوہوں کے بعد ڈینگی سے متاثرہورہے ہیں،رواں ماہ کے دوران 2 افراد ڈینگی کی وجہ سے لقمہ اجل بننے اور150سے زائد متاثرہوئے ہیں اوراگرفوری طورپرڈینگی کے روک تھام کیلئے اقدامات نہ کئے گئے توڈینگی وباکی صورت اختیارکرکے سینکڑوں افرادکی موت کاسبب بن سکتاہے،ان خیالات کااظہارانہوں نے انہوں نے گزشتہ روزیاری کورونہ ورسک روڈ اورمرشدآبادکوہاٹ روڈپرعوامی رابطہ مہم اوراجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کیا،حاجی غلام علی نے ڈینگی سے جاں بحق افرادکے خاندانوں سے ہمدردی کااظہارکرتے ہوئے کہاکہ پشاورکے عوام پہلے چوہے سے تنگ تھے اب ڈینگی نے بھی اپنے پنجے گاڑھ کرشہریوں کاشکارشروع کردیاہے،خیبرپختونخواکابلدیاتی نظام مکمل طورپرناکام ہے،ایک ماہ کے دوران ڈیرھ سوافرادکاڈینگی سے متاثرہ ہوناپی ٹی آئی کی حکومت کیلئے شرم کامقام اورعوامی مسائل میں عدم دلچسپی کاثبوت ہے،انہوں نے کہاکہ عمران خان نے یوم تشکرجلسہ میں عوام سے پھر جھوٹ بولاکہ خیبرپختونخوامیں بنیادی تعلیم اتنی معیاری اورعام ہے کہ تقریباًایک لاکھ بیس ہزاربچوں نے پرائیوٹ سکولزچھوڑکرسرکاری سکولوں میں داخلہ لیاجبکہ حقیقت یہ ہے کہ محکمہ تعلیم نے پشاورکے30سمیت صوبے بھرمیں 150سے زائد سکول طلبہ کی تعدادکم ہونے کی وجہ سے بندکئے ہیں،حاجی غلام علی نے کہاکہ اگرمان لیاجائے کہ ایک لاکھ بیس ہزاربچوں اوربچیوں نے سرکاری سکولوں میں داخلہ لیاہے توخیبرپختونخوامیں سکول کیوں بندکئے جارہے ہیں،پی ٹی آئی یہودی لابی کی ایما پرخیبرپختونخواکی نئی نسل کوعلم سے دورکرکے جہالت کے اندھیروں میں دھکیلنے چاہتی ہے،انہوں نے پرزور مطالبہ کیاکہ غلط اعدادوشمارپیش کرکے عوام کوگمراہ کرنے کی بجائے ڈینگی اوردیگرمسائل کوکنٹرول کرنے کیلئے فوری طورپرحقیقی معنوں میں اقدامات اٹھائے جائیں۔

مزید : پشاورصفحہ آخر