لڑکی سے زیادتی کا مقدمہ 20جولائی کو درج ہوا، مرکزی ملزم سمیت 29افراد کو گرفتار کر لیا گیا، سی پی او ملتان نے رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع کرا دی

لڑکی سے زیادتی کا مقدمہ 20جولائی کو درج ہوا، مرکزی ملزم سمیت 29افراد کو گرفتار ...
لڑکی سے زیادتی کا مقدمہ 20جولائی کو درج ہوا، مرکزی ملزم سمیت 29افراد کو گرفتار کر لیا گیا، سی پی او ملتان نے رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع کرا دی

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)ملتان میں پنچایت کے حکم پر لڑکی سے زیادتی کی رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع کرا دی گئی ،سی پی او ملتان نے رپورٹ عدالت عظمیٰ میں جمع کرادی جس میں کہا گیا ہے زیادتی کی شکار بچی کی والدہ نے 20 جولائی کو درخواست دی تھی جس پر 20 جولائی کوہی مقدمے کا اندراج کیا گیا،رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ مرکزی ملزم سمیت تمام ملزموں کو گرفتار کر لیا گیا متاثرہ لڑکی سے زیادتی پنچایت کے حکم پر ہی کی گئی ۔سی پی او ملتان نے بتایا واقعے کے مجموعی طور پر 3 مقدمات درج کئے گئے ہیں اور29 افراد کو گرفتار کیا گیا ہے ،ملزموں کے خلاف چالان 7 روز میں داخل کر دیا جائے گاملزموں سے مزید تحقیقات جاری ہیں ۔

واضح رہے پنچایت کے حکم پر لڑکی سے زیادتی پر چیف جسٹس سپریم کورٹ نے سی پی او ملتان سے رپورٹ طلب کر رکھی تھی جس پر سی پی او نے رپورٹ عدالت عظمیٰ میں جمع کرا دی۔

مزید : اسلام آباد