کھیل کی اہمیت اور فوائد (آخری قسط)

کھیل کی اہمیت اور فوائد (آخری قسط)

تحریر:ماہ رُخ زاہد

اسی پر ہنری نیوبولٹ نے کہا ہے : ’کھلاڑی کو انعام کی پروا کئے بغیر کھیلنا چاہئے ۔‘ اور اسی کو وہ سامنے رکھ کر دوبارہ کوشش کرتا ہے ۔ اور جیت کی راہ پر گامزن ہوتا ہے ۔ جس سے انسان کا کردار مضبوط ہوتا ہے ۔ اسلئے کہا جاتا ہے کہ کھیل روح کی غذا بھی ہے ۔ کھیل سائنسی طرزسے بھی اہم کردار ادا کرتا ہے ۔ کھیل سے انسان کا دماغ تیز ہوتاہے اور صحیح کام کرنے میں مدد دیتا ہے ۔ جسم کے اعضاء طاقتور اور پٹھے مضبوط ہوتے ہیں ۔ انسان کی طبیعت بھی ہشاش بشاش رہتی ہے ۔ کھیلنے سے انسان کا جسم بالکل فِٹ رہتا ہے اور بیماریاں بھی دور رہتی ہیں ۔ کیونکہ کھیل ورزش کی ہی ایک قسم ہے اور بیماریوں کے خلاف قوتِ مدافعت پیدا کرتی ہے ۔ مختلف بیماریوں کے علاج کو مدِ نظر رکھتے ہوئے میڈیکل کی فیلڈ میں بھی’ فزیکل تھراپی ‘ متعارف کروا ئی گئی ہے ۔ جس میں لوگوں کے دماغ اور جسم کے مختلف اعضاء کے صحیح سے کام کرنے کے لئے مختلف اقسام کی ورزش کروائی جاتی ہے ۔ جوکہ اصل میں کھیل کا ہی حصّہ ہے ۔ اسی کو مدِ نظر رکھتے ایک شعبہ ہیلتھ اینڈ فزیکل ایجوکیشن کے نام سے بنایا گیا ہے ۔ جہاں ورزش اور صحت کے متعلق تعلیم دی جاتی ہے ۔ اور اس پہ ریسرچ اور پریکٹس بھی کروائی جاتی ہے ۔ کیونکہ کہا جاتا ہے کہ جس معاشرے میں کھیل کے میدان آباد ہوتے ہیں تو اس معاشرے کے اسپتال ویران ہوتے ہیں اور ایسے معاشرے کی ترقی اور خوشحالی یقینی ہوتی ہے ۔ وقت کے ساتھ ساتھ حکومت کی جانب سے بھی کھیل کی اہمیت کو سمجھتے ہوئے اقدامات اُٹھائے گئے ہیں ۔ اور حکومت نے تعلیمی اداروں میں بھی کھیل کے میدان کے موجود ہونے پر خاص توجہ دی ہے اور ان تعلیمی اداروں میں کھیلنے کے مناسب وقت ، جگہ اور ماحول کا انتظام کیا ہے ۔ اس سلسلے میں حکومت کی طرف سے ایک بورڈ بھی تشکیل دیا گیا ہے ۔ جوکہ پہلے چھوٹے پیمانے پہ مقابلوں کا انعقاد کرتا ہے ۔ اور پھر بہترین کھلاڑی کو سلیکٹ کر کے اسے قومی اور پھر بین الاقوامی سطح پر کھیلنے کا موقع فراہم کرتا ہے ۔ پہلے صرف مردوں کو اس میں حصہ لینے کی اجازت تھی مگر اب خواتین کیلئے بھی ایک کمیٹی تشکیل دی گئی ہے جو انہیں بھی بین الاقوامی سطح پر کھیلنے کا موقع فراہم کرتی ہے ۔ ان فیسٹیول میں مختلف ممالک سے تعلق رکھنے والے افراد حصّہ لیتے ہیں اور دل و جان سے پُر اعتماد ہو کر اپنی صلاحیتوں کو پیش کرتے ہیں ۔ جہاں قومیں کافی حد تک اپنی ایک شناخت بناتی ہیں اور اپنے ملک کا نام روشن کرتی ہیں ۔ اس لئے کھیلوں کی اہمیت نہ صرف طلباء اور جوانوں میں نا قابلِ تردید ہے بلکہ قوموں کی عظمت اور شناخت بھی کھیلوں سے منسلک ہے ۔اس سے یہ ثابت ہوتا ہے کہ کھیل نا صرف انسان کی ذاتی زندگی پر اثر انداز ہوتا ہے بلکہ ملک کی خوشحالی اور ترقی میں بھی ایک خاص حیثیت رکھتا ہے ۔ اور تو اور کھیل وقت کا ضیاع نہیں بلکہ یہ وہ وقت ہے جو انسان کی مصروفیت بھری زندگی کو خوشگوار بنا تا ہے ۔

مزید : رائے /کالم