الیکشن میں حصہ لینے والے 161امیدواروں کو فوری گرفتار کر لیا جائے گا کیونکہ۔۔۔

الیکشن میں حصہ لینے والے 161امیدواروں کو فوری گرفتار کر لیا جائے گا کیونکہ۔۔۔
الیکشن میں حصہ لینے والے 161امیدواروں کو فوری گرفتار کر لیا جائے گا کیونکہ۔۔۔

  


ملتان(مانیٹرنگ ڈیسک) ملتان کی عدالتوں نے مختلف سیاسی جماعتوں کے عام انتخابات میں حصہ لینے والے امیدواروں کی قبل از گرفتاری ضمانتیں منسوخ کر دی ہیں اور اب ممکنہ طور پر انہیں گرفتار کر لیا جائے گا۔ ایکسپریس ٹربیون کی رپورٹ کے مطابق ان امیدواروں کا تعلق پاکستان مسلم لیگ ن، پاکستان پیپلزپارٹی، تحریک لبیک پاکستان، مستقبل پاکستان پارٹی، آل پاکستان مسلم لیگ، اللہ اکبر تحریک، سنی تحریک، متحدہ مجلس عمل، پاکستان کسان اتحاد، پاکستان عوامی راج پارٹی، عوامی نیشنل پارٹی، پاک سرزمین پارٹی، پاکستان سرائیکی پارٹی اور سرائیکستان ڈیموکریٹک پارٹی سے تھا جبکہ کئی آزاد امیدوار تھے۔

ان امیدواروں میں سے 50نے قومی اسمبلی کی 6نشستوں پر، جبکہ 111نے صوبائی اسمبلی کی 13نشستوں پر الیکشن لڑا تھا ۔ عدالتوں نے انہیں عام انتخابات کی وجہ سے ضمانتیں دی تھیں۔ ان میں لوگوں میں اکثریت مذہبی جماعتوں کی ہے جو پنجاب اسمبلی کی ایک بھی نشست جیتنے میں کامیاب نہیں ہو سکیں۔ایکسپریس ٹربیون نے ملتان کے 6حلقوں میں ان امیدواروں کے متعلق لوگوں سے بات کی۔ ان کا کہنا تھا کہ ”یہ لوگ کرپشن کے الزامات میں نیب، ایف آئی اے اور اداروں کو مطلوب تھے جس کی وجہ سے ہم نے انہیں انتخابات میں مسترد کیا۔“

مزید : علاقائی /پنجاب /ملتان


loading...