کراچی کی مویشی منڈی میں سیلابی ریلہ داخل، 100سے زائد گائیں ہلاک 

کراچی کی مویشی منڈی میں سیلابی ریلہ داخل، 100سے زائد گائیں ہلاک 

  

کراچی (آئی این پی) کراچی میں لٹھ اور تھڈو ڈیم میں شگاف پڑنے سے سپرہائی وے سے متصل رہائشی علاقے اور مویشی منڈی کا بڑا حصہ زیر آب آگیا جس کے نتیجے میں قربانی کے لیے آنے والی درجنوں گائے مرگئیں۔مویشی منڈی کے ایک بیوپاری کے مطابق وہ ڈھرکی سے(بقیہ نمبر55صفحہ12پر)

 35 جانور منڈی لایا تھا جہاں اس نے 80ہزار روپے میں جگہ حاصل کی، انتظامیہ نے جگہ دیتے وقت تمام سہولتیں دینے کا وعدہ کیا تاہم سیلاب کے آتے ہی انتظامیہ کہیں نظر نہیں آرہی۔بیوپاری نے بتایا کہ وہ اپنی 10 گائے بمشکل پانی سے نکال سکا ہے جبکہ باقی گائیں اور کھانے پینے کا سامان وہیں پھنسا ہوا ہے۔گھوٹکی کے بیوپاری کا کہنا تھا کہ سیلاب کے باعث 100کے قریب گائے مرچکی ہیں جبکہ درجنوں گائے سر تک پانی میں ڈوبی ہیں جن کے مرنے کا خدشہ ہے۔مویشی منڈی کے کوآرڈینیٹر نے بتایا کہ بعض بلاکس کے کوئی پیسے نہیں لیے گئے اور بیوپاریوں کو جگہ مفت دی گئی ہے جبکہ مویشیوں کو محفوظ مقامات تک پہنچانے کے لیے ہمارے رضاکار موجود ہیں، متعدد بیوپاریوں کی من مانی کے باعث ان کے جانور پانی میں پھنس گئے ہیں۔

سیلابی ریلا

مزید :

ملتان صفحہ آخر -