200ارب مالیت کے سکوک بانڈز کا اجرا اگست کے وسط میں متوقع

  200ارب مالیت کے سکوک بانڈز کا اجرا اگست کے وسط میں متوقع

  

کراچی(این این آئی)وفاقی حکومت بجلی کی مد میں 200 ارب روپے کا گردشی قرضہ اتارنے کیلئے اگست کے وسط میں اتنی ہی مالیت کے مشارکہ سکوک اسلامی بانڈز جاری کرے گی، اس مقصد کیلئے اسلامی بینکاری کی خدمات فراہم کرنے والے بینکوں کی کنسورشیم کے پاس بجلی کی تقسیم کار کمپنیوں کے اثاثہ جات گروی رکھ کر قرضہ حاصل کیا جائے گا جس کے بعد رقم فوری طور نجی بجلی گھروں کے اکاؤنٹس میں منتقل کی جائے گی، بجلی کی تقسیم کار کمپنیوں کے اثاثوں کی فہرستیں اور ان کی مالیت کی تفصیل بینکوں کو پیش کردی گئی ہے، اب بینک ان بانڈز کی مدت، شرح منافع اور ٹریڈنگ کے حقوق کی شرائط کا ڈرافٹ وزارت خزانہ کو پیش کریں گے جس کی حتمی منظوری کابینہ کی اقتصادی رابطہ کمیٹی کے آئندہ اجلاس میں دی جائے گی۔ اقتصادی رابطہ کمیٹی کا اجلاس رواں ہفتے مشیر خزانہ ڈاکٹر عبدالحفیظ شیخ کی صدارت میں ہوگا، میزان بینک کی سربراہی میں اسلامی بینکاری کی خدمات فراہم کرنے والے بینکوں کی کنسورشیم میں حبیب بینک، بینک الفلاح، بینک البراکہ، نیشنل بینک آف پاکستان، یونائیٹڈ بینک،فیصل بینک ودیگر شامل ہیں۔ یاد رہے کہ مارچ 2019 میں بھی حکومت نے 200 ارب روپے کے سکوک بانڈز جاری کیے تھے۔

مزید :

کامرس -