وزیراعظم عمران خان نئے پاکستان کے وژن پر عمل پیرا ہیں، شوکت علی یوسفزئی

  وزیراعظم عمران خان نئے پاکستان کے وژن پر عمل پیرا ہیں، شوکت علی یوسفزئی

  

پشاور(سٹاف رپورٹر)صوبائی وزیر اطلاعات و تعلقاتِ عامہ شوکت علی یوسفزئی نے کہا ہے کہ وزیر اعظم عمران خان نئے پاکستان کے وژن پر عمل پیرا ہیں اور میڈیا عمران خان کے وژن میں بھرپور ساتھ دے رہا ہے عمران خان نے انتخابات سے قبل چوروں کو جیلوں میں ڈالنے کا وعدہ کیا تھا آج بڑے بڑے چور جیلوں میں ہیں اور چوروں کے خلاف کلین سویپ کیا جا رہا ہے پشاور میں سوات پریس کلب کے چیئرمین شہزاد عالم اور سینئر صحافی ضیاء الحق کی معیت میں وفد سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت عوامی مشکلات کے خاتمے کیلئے تمام تر وسائل بروئے کار لارہی ہے اور وزیر اعلیٰ محمود خان کی قیادت میں ایک مضبوط اور تجربہ کار ٹیم اس صوبے میں انقلاب لانے کیلئے کوشاں ہے صوبے میں بڑے بڑے میگا پراجیکٹس پر کام تیزی سے جاری ہے اور اسکی تکمیل سے صوبے میں ترقیاتی انقلاب برپا ہوجائیگا انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان بھی صوبے کے مسائل حل کرنے میں خصوصی دلچسپی لے رہے ہیں اور بہت جلد صوبے کیلئے خصوصی اقدامات کا اعلان کیا جائیگا انہوں نے کہا کہ انتخابات سے قبل وزیر اعظم عمران خان نے اس ملک کو کرپشن سے پاک کرنے اور چوروں کو جیلوں میں ڈالنے کا جو اعلان کیا تھا اس پر کام جاری ہے اور آج باریوں کی شکل میں حکمرانی کے مزے لوٹنے والے مہا سیاسی چور اور ڈاکو جیلوں میں ہیں جن سے قوم کی پائی پائی کا حساب لیا جا رہا ہے اور جب تک وہ عوام کا پیسہ واپس نہیں کرتے وہ جیلوں میں رہینگے صوبہ میں کلین سویپ بھی جاری ہے بہت جلد مزید چوروں کو بھی جیلوں میں ڈال دیا جائیگا اور عمران خان کے وژن کو پایہ تکمیل تک پہنچایا جائیگا شوکت علی یوسفزئی نے کہا کہ عمران خان کے وژن پر میڈیا انکا بھر پور ساتھ دے رہا ہے کیونکہ وہ بھی اس ملک کو کرپشن فری دیکھنا چاہتے ہیں انہوں نے کہا کہ میرا دامن صاف ہے آج تک کسی بھی ترقیاتی منصوبے یا دیگر کاموں میں کوئی مداخلت نہیں کی ہے اور نہ ہی کوئی دباؤ ڈالا ہے انہوں نے کہا کہ میرے حلقہ نیابت شانگلہ میں اربوں روپے کی لاگت سے ترقیاتی کام جاری ہے اور ہم نے شانگلہ کے عوام کی پسماندگی دور کرنے کا تہیہ کر رکھا ہے وہاں کے عوام کو معیاری تعلیم انکی دہلیز پر فراہم کرنے کیلئے یونیوسورسٹی کیمپس کا قیام عمل میں لایا گیا ہے اور وہ دن دور نہیں جب اسے یونیورسٹی کا درجہ بھی دیدیا جائیگا جبکہ روڈ، بجلی اور گلی کوچوں کی تعمیر پر کام اور سیاحت کے فروغ کیلئے خصوصی اقدامات بھی اٹھائے جائینگے۔

مزید :

صفحہ اول -