سکرین پر ہاتھ کے بجائے آنکھوں سے زوم کرنے کی ٹیکنالوجی آگئی، یہ کیسے کام کرتی ہے؟ آپ بھی جانئے

سکرین پر ہاتھ کے بجائے آنکھوں سے زوم کرنے کی ٹیکنالوجی آگئی، یہ کیسے کام کرتی ...
سکرین پر ہاتھ کے بجائے آنکھوں سے زوم کرنے کی ٹیکنالوجی آگئی، یہ کیسے کام کرتی ہے؟ آپ بھی جانئے

  


نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) اب تک تو ہم موبائل فون یا کمپیوٹر کی سکرینوں پر تصاویر کو ’زوم اِن‘ یا ’زوم آﺅٹ‘ کرکے دیکھتے تھے لیکن اب سائنسدانوں نے ایسی حیران کن ایجاد کر ڈالی ہے کہ لوگ اپنی آنکھوں سے براہ راست مناظر کو ’زوم اِن‘ اور ’زوم آﺅٹ‘ کر سکیں گے۔

دی انڈیپنڈنٹ کے مطابق امریکہ کی یونیورسٹی آف کیلیفورنیا سین ڈیاگو کے سائنسدانوں نے یہ متحیر کن ’روبوٹک لینز‘ تیار کیے ہیں جو آنکھوں میں پہنے جا سکتے ہیں اور انہیں آنکھوں کی حرکت سے ہی کنٹرول کیا جا سکتا ہے۔

لوگ جب ان روبوٹک لینز کو پہن کر آنکھوں کو دو بار تیزی سے جھپکیں گے تو یہ سامنے کے منظر کو ’زوم اِن‘ کر دیں گے اور دوبارہ آنکھیں جھپکنے پر منظر واپس ’زوم آﺅٹ‘ ہو جائے گا۔ سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ ”یہ لینز انسانی آنکھ کے دیدے میں پائے جانے والے قدرتی برقی سگنلزکی طرح سے کام کرتے ہیں۔ “ تحقیقاتی ٹیم کے سربراہ شینگ کیانگ شی کا کہنا تھا کہ ”یہ لینز پولیمرز کے بنائے گئے ہیں جو کہ برقی کرنٹ ملنے پر پھیل جاتے ہیں، جس سے منظر قریب آ جاتا ہے۔ یہ انتہائی اہم ایجاد ہے کیونکہ اس سے مصنوعی آنکھ کی ایجاد یا ایسے کیمرے کی ایجاد کی راہ ہموار ہو گی جسے آنکھ کے ذریعے کنٹرول کیا جا سکے گا۔“

مزید : سائنس اور ٹیکنالوجی