آج عید ہے

آج عید ہے
آج عید ہے

  

آج عید ہے بہت خوشی کا اور برکتوں والا دن جی ہاں عید قربان جی ہاں عید قربان کے موقع پہ سنت ابراہیمی پر عمل کرتے ہیں جی ہاں عید قربان کے موقع پہ سب حسب توفیق قربانی کرتے ہیں وہ بھی اپنے رب کی رضا محض اللہ پاک کی خوشنودی کے لئے جی ہاں ہم مسلمان ہیں اور اللہ پاک کی طرف سے ہمیں سال میں دو عیدیں جن میں عید الفطر اور عید قربان عطا کی ہیں جی ہاں آج عید قربان ہے اور عید کا دن سب سے خوشی کا دن ہے ہم سب مسلمانوں کے لئے۔جی ہاں عید کے دن سب مل کے عید کی نماز پڑھتے ہیں پھر ایک دوسرے سے گلے ملتے ہیں مصافحہ کرتے ہیں اور یقینا جب ہم مسلمان دل صاف کر کے گلے ملتے ہیں تو سب کے گناہ بھی دھل جاتے ہیں۔ جی ہاں اور سنا ہے کہ اس عید پر گلی محلوں میں قربانی کی کھالیں جمع کرنے پر بھی پابندی لگا دی گئی ہے جی ہاں ویسیتو غالبا ہر سال ہی لگتی ہے لیکن پھر بھی لوگ چھپ چھپا کے کھالیں اکٹھی کرنے نکل جاتے ہیں بہر حال عید کا دن یقینا خوشی کا دن ہی ہوتا ہے لیکن حقیقی خوشی تو اس وقت ملتی ہے جب ہم اپنے ایسے بھائیوں کو اپنی خوشیوں میں شامل کریں جو عید کی خوشیوں سے محروم ہیں جی ہاں یقینا قربانی کے جانور کے گوشت کو بھی تین حصوں میں تقسیم کرنے کا حکم ہے جی ہاں ایک حصہ ہمسایوں رشتہ داروں کا دوسرا حصہ غریب مساکین کے لئے اور باقی بچ جانے والا گوشت اپنے لئے استعمال کر سکتے ہیں جی ہاں اور یقینا عید کے دن اگر آپ اپنے دیگر بھائیوں کی مدد کرینگے گے تو بہت اچھی بات ہو گی اور یقینا حقیقی خوشی بھی حاصل ہو گی تو بہر حال آپ سے اجازت لیکن چلتے چلتے ہماری طرف سے بھی آپ سب کو بڑی عید کی بڑی بڑی خوشیاں مبارک ہوں۔ تو چلتے چلتے اللہ نگھبان۔ رب راکھا

مزید :

رائے -کالم -